.

یمن: حوثیوں کی کارروائیوں میں ایک بچہ جاں بحق اور متعدد افراد زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے مغربی صوبے الحدیدہ میں منگل کے روز حیس اور التحیتا ضلعوں میں حوثیوں کی کارروائیوں میں ایک یمنی بچہ جاں بحق اور ایک عورت اور ایک بچہ زخمی ہو گئے۔

حیس شہر میں حوثی ملیشیا کے نشانچی کی گولی نے 8 سالہ بچے عدنان حسین کو موت کی نیند سلا دیا جب کہ التحیتا ضلع کے پہاڑی علاقے میں توپ کے گولے کے ٹکڑے لگنے سے ایک بچہ اور ایک عورت زخمی ہو گئے۔

ادھر مشترکہ یمنی فورسز نے الدریہمی ضلع میں حوثی ملیشیا کی گولہ باری کے ذریعے ہونے والے شدید حملے کو پسپا کر دیا۔

واضح رہے کہ حوثی ملیشیا نے گذشتہ چند روز کے دوران حیس، الخوخہ، التحیتا، الدریہمی کے علاوہ الحدیدہ شہر کے نواحی علاقوں میں حکومتی فورسز کے ٹھکانوں پر حملوں میں اضافہ کر دیا ہے۔

یمن کے جنوبی صوبے الضالع کے شمال میں قعطبہ ضلع میں القفلہ گاؤں پر حوثیوں نے شہریوں کے گھروں کو گولہ باری کا نشانہ بنایا۔ اس کے نتیجے میں ایک ہی گھرانے کے تین بچے اور ان کی ایک بہن زخمی ہو گئی۔ زخمی ہونے والوں میں مثنى عبدالله (15 سالہ)، تغريد عبدالله (7 سالہ)، مختار عبدالله (8 سالہ) اور ان کی بہن غادہ عبدالله (18 سالہ) شامل ہیں۔

ذرائع کے مطابق چاروں افراد کو گہرے زخمی آئے ہیں اور انہیں عارضی دارالحکومت عدن کے ایک ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔

بم باری کے نتیجے میں مذکورہ گاؤں میں تین گھر بھی تباہ ہو گئے۔