مغربی کنارا : یہودی بستی کے نزدیک اسرائیلی فوجی کی لاش برآمد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

العربیہ کے نمائندے کے مطابق قابض اسرائیلی فوج مغربی کنارے میں یہودی بستیوں کے کمپاؤنڈ "گوش ایٹزیون" کے اطراف وسیع پیمانے پر سرچ آپریشن کر رہی ہے۔ یہ پیش رفت ایک اسرائیلی فوج کی لاش ملنے کے بعد سامنے آئی ہے۔ فوجی کو چاقو کے وار سے ہلاک کیا گیا۔

العربیہ کے نمائندے کا کہنا ہے کہ غالب گمان یہ ہے کہ اسرائیلی فوجی خود کو قیدی بنائے جانے کی کوشش کے دوران مارا گیا۔

اسرائیلی فوج نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ جائے حادثہ پر موجود فورسز جن میں شاباک انٹیلی جنس اور پولیس شامل ہے ، اس نے فوجی کی ہلاکت کا سبب متعین کرنے کے لیے تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے۔

گذشتہ رات کے دوران یہ اطلاع موصول ہوئی کہ مجدل عوز کے علاقے سے ایک 18 سالہ لڑکا غائب ہو گیا ہے۔ لڑکے کے اہل خانہ کے مطابق وہ بدھ کی شام سے اس کے ساتھ رابطہ نہیں کر سکے۔

اسرائیلی اخبار "ہآرٹز" کے مطابق فوج کے ابتدائی تجزیے کا نتیجہ یہ ہے کہ اسرائیلی فوجی چاقو کے وار سے حملے کا نشانہ بنا جو مبینہ طور پر کسی فلسطینی نے کیا تھا۔ تاہم تجزیے میں کہا گیا ہے کہ چاقو سے حملے کے سبب کا تعین کرنا قبل از وقت ہو گا۔

اسرائیلی فوج کے مطابق مقتول فوجی کو بھرتی کر لیا گیا تھا تاہم وہ مذہبی تعلیم کے حصول میں مصروفیت کے سبب خدمات انجام نہیں دے سکا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں