'اسرائیل سے کاروبار کی بہتی گنگا میں ایردوآن کے مقربین بھی نہا رہے ہیں'

اسرائیلی وزیرخارجہ نے ترک صدر کا اصل چہرہ دکھا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی وزیرخارجہ یسرائیل کاٹز نے دعویٰ کیا ہے کہ ترکی کے صدر رجب طیب ایردوآن کے مقربین صہیونی ریاست کے ساتھ کھل کر کاروبار کرتے اور بھرپور منافع کماتے ہیں۔ اسرائیلی وزیر کی طرف سے یہ بیان ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب حال ہی میں ترک صدرنے کہا تھا کہ وہ ہر اس شخص کے خلاف ہیں جو اسرائیل کے ساتھ تجارت اور مالیاتی سمجھوتوں کے ذریعے منافع حاصل کرتا ہے۔

ترکے ذرائع ابلاغ نے اسرائیلی وزیرکا بیان عبرانی میڈیا سے نقل کیا ہے۔ ذرائع ابلاغ کے مطابق کنیسٹ کی خارجہ اور سیکیورٹی کمیٹی کے اجلاس سے خطاب میں وزیرخارجہ یسرائیل کاٹز نے کہا کہ ترک صدر کہتے ہیں کہ 'ہم اسرائیلیوں سے محبت نہیں کرتے اور اسرائیلی ہمیں پسند نہیں کرتے'۔ کاٹز کا کہنا تھا کہ ترکی اور قطر دونوں نے اخوان المسلمون کو پناہ دے رکھی ہے۔ حالانکہ اخوان المسلمون بھی عرب ممالک کے لیے کم خطرہ نہیں۔

اسرائیلی وزیر نے مزید کہا کہ ترکی اور اسرائیل کے درمیان دشمنی واضح ہے مگر دونوں ملکوں میں تجارت نہ صرف جاری ہے بلکہ اس میں اضافہ ہوا ہے۔ حتیٰ کہ ترک صدر طیب ایردوآن کے خاندان کے بعض افراد بھی مال بردار جہاز حیفا کی بندرگاہ لاتے اور سامان فروخت کرکے منافع کماتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ترک مصنوعات حیفا کے راستے اردن اور وہاں سے خلیجی ملکوں تک پہنچائی جاتی ہیں۔ یہ سب کچھ باقاعدہ اور سرکاری سطح پر ہو رہا ہے۔ جب سے شام کی سرزمین سے ترک مصنوعات اور مال بردار گاڑیاں عرب ملکوں تک پہنچنا بند ہوئی ہیں انقرہ نے تل ابیب کے راستے سے فائدہ اٹھایا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں