حوثی لیڈر کے بھائی کا قتل تنظیم کے اندرونی اختلافات کا نتیجہ ہے:عرب اتحاد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن میں آئینی حکومت کی بحالی کے لیے معاونت کرنے والے عرب اتحاد نے حوثیوں کی طرف سے ان الزامات کو مسترد کردیا ہے جن میں کہا گیا تھا کہ حوثی تنظیم کے سربراہ عبدالملک الحوثی کے بھائی ابراہیم الحوثی کو عرب اتحاد نے قتل کیا ہے۔ عرب اتحادی فوج کا کہنا ہے کہ ابراہیم الحوثی کا قتل حوثی ملیشیا کے اندرونی اختلافات اور اقتدار کی رسا کشی کا نتیجہ ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق عرب اتحاد کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ابراہیم الحوثی کو حوثی ملیشیا کے صنعاء میں قائم ایک مرکز میں ہلاک کیا گیا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ حوثی لیڈر شپ خیانت کی آڑ میں اپنے ہی لوگوں کی گردنیں مار رہی ہے۔

خیال رہےکہ حوثی ملیشیا نے جمعہ کے روز ایک بیان میں اعتراف کیا تھا کہ باغی تنظیم کے سربراہ عبدالملک الحوثی کے ایک بھائی ابراہیم بدرالدین الحوثی کو قتل کردیا گیا ہے۔

حوثیوں کی وزارت داخلہ نے ابراہیم الحوثی کے قتل کی شدید مذمت کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ ابراہیم کو قاتلانہ حملے میں ہلاک کیا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں