.

یمن:عبوری کونسل نے سعودی عرب کی اپیل پرشبوۃ میں لڑائی روک دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

جنوبی یمن کی علاحدگی کے لیے سرگرم عبوری کونسل نے سعودی عرب کی اپیل پر شبوۃ گورنری میں جنگ بند کرتے ہوئے یمنی حکومت کے ساتھ بات چیت پرآمادگی ظاہر کی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق عبوری کونسل کا ایک وفد سعودی عرب کے شہر جدہ پہنچ گیا ہے۔ عبوری کونسل نے آئینی صدر عبد ربہ منصور ھادی کے حوالے سے اعتراضات ختم کردیے ہیں اور انہیں صدر تسلیم کرنے پراتفاق کیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ شبوۃ گورنری میں عبوری کونسل نے جنگ بندی کی سعودی عرب کی اپیل پرعمل درآمد کرتے ہوئے حکومت کے ساتھ جاری اختلافات بات چیت کے ذریعے ختم کرنے کا اعلان کیا ہے۔

حکومت کے ساتھ جاری اختلافات ختم کرنے کے لیے عبوری کونسل آنے والے دنوں میں ٹھوس اور نتیجہ خیز مذاکرات کے لیے تیار ہے۔

جمعہ کو یمنی وزیراعظم معین عبدالملک نے شبوۃ کی تمام قوتوں سے اپنی صفوں میں اتحاد پیدا کرنے کی اور ملک کی سلامتی کو لاحق خطرات کا مل کرمقابلہ کرنے کی ضرورت پر زرو دیا تھا۔ انہوں نے شبوۃ کے گورنر کو ٹیلیفون کرکے وہاں کے حالات اور آئینی حکومت کی عمل داری کی بحالی کے معاملے پر بات چیت کی۔

اس موقع پر شبوۃ کے گورنر نے مقامی حکومت، نیشنل آرمی اور دیگر حکومت نواز فورسز کی معاونت سے گورنری میں امن وامان کے قیام کے لیے جاری کوششوں کے بارے میں آگاہ کیا۔

جمعہ کو العربیہ نیوز چینل کے ایک ذریعے نے بتایا تھا کہ شبوۃ گونری میں صدر عبد ربہ منصورھادی کی وفادار فورسز نے سیکیورٹی کے تمام انتظامات دوبارہ سنھبال لیے ہیں۔