سعودی عرب میں بوائز اسکولوں میں خواتین معلمات تعینات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کی وزارت تعلیم نے باور کرایا ہے کہ مملکت میں قائم تمام بوائز اسکول معمول کے مطابق چل رہے ہیں۔ ملک میں کوئی بوائز اسکول بند نہیں کیا گیا۔ وزارت تعلیم کا کہنا ہے کہ والدین اور سرپرست حضرات اپنے بچوں کو نرسری یا پریپ کے بجائے براہ راست بوائز اسکولوں کی ابتدائی جماعت میں داخل کرسکتے ہیں۔ یہ والدین کا اپنا اختیار ہے جس میں حکومت کی طرف سے کوئی عمل دخل نہیں۔

وزارت تعلیم کا کہنا ہے کہ پریپ اور نرسری اسکولوں کے ساتھ ساتھ بوائز اسکولوں میں بھی معلمات تعینات کی گئی ہیں۔ اسکولوں میں کمرہ ہائے جماعت، الگ سے ٹوائلٹ اور دیگر سہولیات دی گئی ہیں۔ اسکولوں میں بچوں کو مخلوط نہیں رکھا گیا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ سعودی عرب میں پری نرسنگ اسکولوں کی تعداد 1460 ہے جن میں 3313 کلاسز قائم ہیں اور 83 ہزار بچے زیرتعلیم ہیں۔ ان اسکولوں میں بچوں کے داخلے کی شرح 17 سے 21 فی صد ہے۔ جماعت اول کی 3483 کلاسز تیار کی گئی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں