.

سلیمانی اور حسن نصر اللہ خود ہی اپنی 'اداؤں' پرغور کریں: نیتن یاھو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیلی وزیراعظم بنجمن نیتن یاھو نے لبنانی شیعہ ملیشیا حزب اللہ کے سربراہ حسن نصراللہ اور ان کے ساتھ ایران اور لبنان کوسنگین نتائج کی دھمکی دی ہے۔ نیتن یاھو کا کہنا ہے کہ حسن نصراللہ اور ایرانی پاسداران انقلاب کی سمندر کارروائیوں کے ذمہ دار جنرل قاسم سلیمانی خود ہی اپنے افعال پر غور کریں۔

اسرائیلی وزیراعظم کی طرف سے یہ دھمکی آمیز بیان ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب اتوار کی شب اسرائیل کے دو ڈرون طیارے جنوبی بیروت میں الضاحیہ کے مقام پر گر کر تباہ ہوگئے تھے۔

منگل کو ایک پریس کانفرنس میں نیتن یاھو نے کہا کہ حزب اللہ کے سیکرٹری جنرل حسن نصر اللہ کو معلوم ہے کہ اسرائیل کو اپنے دفاع کا پتا ہے۔ وہ جانتے ہیں کہ تل ابیب اپنے دشمنوں سے کیسے نمٹتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حسن نصراللہ کی باتیں میں نے سنی ہیں۔ میں انہیں مشورہ دیتا ہوں کہ زیادہ گرمی نہ دکھائی۔ آپ کو پتا ہے کہ اسرائیل اپنا دفاع کرنا جانتا اور اپنے دشمنوں سے نمٹنے کا طریقہ معلوم ہے۔

اس کے ساتھ ساتھ نیتن یاھو نے ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کو بھی مشورہ دیا کہ وہ اپنے اقوال اور افعال پر خود ہی غور کریں۔

خیال رہے کہ حسن نصراللہ نے لبنان میں اسرائیل کے دو بمبار ڈرون حملوں پر سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیلی حملے خطرناک پیش رفت ہے۔ انہوں نے اسرائیلی فوج کے خلاف کھلی جنگ کی دھمکی دی۔