.

اسرائیل کے مقبوضہ گولان کے نزدیک شامی علاقے میں کلسٹر بموں سے لدا ڈرون تباہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام کی سکیورٹی فورسز نے اسرائیل کے مقبوضہ گولان کی چوٹیوں کے نزدیک واقع علاقے میں ایک ڈرون کو تباہ کردیا ہے۔ شامی حکام کے مطابق یہ بغیر پائیلٹ طیارہ کلسٹر بموں سے لدا ہوا تھا۔

شام کی سرکاری خبررساں ایجنسی سانا نے ہفتے کے روز اس ڈرون کو تباہ کرنے کی خبر دی ہے اور اس کی متعدد تصاویر پوسٹ کی ہیں لیکن یہ نہیں بتایا کہ یہ ڈرون کہاں سے آیا تھا۔شامی حکام کا کہنا ہے کہ ڈرون انتہائی دھماکا خیز بموں سے لدا ہوا تھا اور اس کو صوبہ القنیطرہ میں مار گرایا گیا ہے۔

اس واقعے سے دوروز قبل شامی فوج نے دارالحکومت دمشق کے نواح میں واقع علاقے اقربا میں ایک اور ڈرون کو مارگرایا تھا۔کسی گروپ یا ملک نے ان ڈرونز کی ذمے داری قبول نہیں کی ہے۔

اسرائیل جنگ زدہ شام کے مختلف علاقوں میں آئے دن فضائی اور میزائل حملے کرتا رہتا ہے لیکن وہ کم ہی ان کی تصدیق کرتا ہے۔اسرائیل کا کہنا ہے کہ وہ شام میں ایرانی فورسز کے اڈوں اور لبنانی ملیشیا حزب اللہ کے ٹھکانوں کو فضائی حملوں میں نشانہ بناتا ہے۔

ادھر پڑوسی ملک لبنان میں حکومت نے گذشتہ ماہ دارالحکومت بیروت کے نواحی علاقے میں دو اسرائیلی ڈرون کے گرنے کی تحقیقات مکمل کر لی ہے۔اس کا کہنا ہے کہ یہ دونوں ڈرون حملے کے مشن پر تھے لیکن گر کر تباہ ہوگئے تھے۔ ان میں سے ایک پر ساڑھے چار کلو گرام دھماکا خیز مواد لدا ہوا تھا۔