.

شاہ فیصل کی زندگی پر مبنی فلم "Born A King" سعودی عرب اور خلیج میں سرفہرست

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے تیسرے فرماں روا شاہ فیصل بن عبدالعزیز کی زندگی پر بنائی گئی بین الاقوامی فلم(Born A King) جمعرات کے روز نمائش کے لیے پیش کیے جانے کے بعد سعودی عرب اور خلیجی ممالک کے سینیما ہاؤسز میں سرفہرست ہے۔

پہلے ہفتے میں اس فلم کو دیکھنے والوں کی مجموعی تعداد 59 ہزار رہی۔ ان میں 30 ہزار ناظرین صرف سعودی عرب میں تھے۔

یہ فلم سعودی عرب ، برطانیہ اور اسپین کی مشترکہ پروڈکشن ہے۔ فلم کی کہانی شاہ فیصل مرحوم کی ابتدائی زندگی کے گرد گھومتی ہے اور اس میں شاہ فیصل کے 13 سال کی عمر میں برطانیہ کے دورے کو بھی دکھایا گیا ہے۔ شاہ فیصل نے یہ دورہ 15 ذو القعدہ 1337 ہجری مطابق 11 اگست 1919 کو کیا تھا۔ اس دورے میں ننھے شاہ فیصل نے انگلستان کے بادشاہ جورج پنجم سے ملاقات بھی کی۔

دورے کی دعوت انگلستان کے بادشاہ کی جانب سے شاہ عبدالعزیز آل سعود کو دی گئی تھی۔ اس کے جواب میں شاہ فیصل نے اپنے والد کی نمائندگی کرتے ہوئے انگلستان کا دورہ کیا۔

واضح رہے کہ فلم (Born A King) کو اس وقت سعودی عرب اور خلیجی ممالک کے سینیماؤں میں نمائش کے لیے پیش کیا گیا ہے۔ فلم کی عکس بندی ریاض اور لندن میں کی گئی۔ اس کے پروڈیوسر اسپین کے آندرس گومز ہیں جو آسکر ایوارڈ بھی حاصل کر چکے ہیں۔ فلم کے ڈائریکٹر آگوستی ویارونگا کا تعلق بھی اسپین سے ہے۔ فلم کی کہانی بدر السماری (سعودی عرب) اور ہنری فٹزربرٹ نے لکھی ہے۔ فلم کی کاسٹ میں یورپ اور سعودی عرب کے منجھے ہوئے اداکار شامل ہیں۔