.

دبئی میں دنیا کے مہنگے ترین جوتوں کی نمائش

سونے کی ایڑی سے تیار کردہ جوتے میں 30 قیراط ہیرے شامل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ امارات کے تجارتی اور سیاحتی مرکز دبئی میں دنیا کے مہنگے ترین جوتوں کی نمائش کی گئی۔'دی مون اسٹار شوز' نامی اس مہنگے جوتے کو 30 قیراط ہیرے ،سونا اور ایک قدیم قیمتی پتھر سے مزین کیے گئے ہیں۔ دبئی میرینا میں اس مہنگے جوتے کو ایک کشتی پر رکھا گیا ہے جو دنیا بھر میں اپنی قیمت کے اعتبار سے گراں قیمت ہے۔ قیمت کے اعتبار سے اسے گینزبک آف ورلڈ ریکارڈ میں مہنگا ترین جوتا قرار دیا گیا ہے۔

اس جوتے پر دبئی میں مقیم اطالوی ڈیزائنر انٹونیو واتری کے دستخط ثبط ہیں۔ اس کی قیمت 19.9 ملین ڈالریعنی 73 ملین اماراتی درہم کے مساوی ہے۔دنیا کا یہ مہنگا ترین جوتا اٹلی میں تیارکیا گیا جب کہ اس کا ڈیزائن امارات میں بنایا گیا ہے۔ خیال رہے کہ اس سے قبل دنیا کے سب سے مہنگے جوتے کی گنیز بک میں ریکارڈ قیمت 15.5 ملین ڈالر ہے۔

انوکھی خصوصیات

سونے کی ایڑی والے اس جوتے میں 30 قیراط کے ہیرے شامل ہیں اور اس میں 1576 میں ارجنٹائن میں دریافت ہونے والے آثار قدیمہ کا ایک چھوٹا ٹکڑا ہے۔ یہ پہلا موقع نہیں ہے جب ڈیزائنر انتونیو واتری نے ریکارڈ توڑ جوتا پیش کیا ہو۔

سنہ 2017ء میں بھی انہوں نے سٹیلیٹو کے جوتے 700 گرام سے زیادہ 24 قیراط سونے کے ساتھ ڈیزائن کیے تھے۔ اس وقت اس جوتے کی اماراتی کرنسی میں قیمت 12 لاکھ اماراتی درہم سے زیادہ تھی۔ ڈیزائنر کا کہنا ہے ہر چیز ممکن ہے۔ ناممکن لفظ میری لغت میں نہیں ہے۔