.

البغدادی کے خلاف آپریشن میں ہلاک ہونے والے جنگجوئوں کی تصاویر جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

'العربیہ' نے حسب معمول شمالی شام میں امریکی اسپیشل فورسز کے ایک آپریشن میں داعش کے سربراہ ابو بکر البغدادی کے ہلاک ہونے والے ساتھیوں کی پہلی تصاویر سب سے پہلے نشر کی ہیں۔ ان تصاویر میں مقتول جنگجوئوں کی نعشیں دکھائی گئی ہیں۔ خیال رہے کہ آپریشن میں البغدادی کو بھی ہلاک کردیا گیا۔

گذشتہ روز امریکی حکام نے دعویٰ کای تھا کہ 'داعش' کا سربراہ البغدادی شمالی شام میں اسپیشل فورس کی ایک کارروائی کے دوران ہلاک ہوگیا ہے۔

وائٹ ہاؤس نے ٹویٹر پر امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کی ٹیم کی دو تصاویر پوسٹ کیں۔ ان تصاویر میں صدر اور ان کی ٹیم البغدادی کے خلاف کی گئی کارروائی کو دیکھ رہے ہیں۔

اتوار کو صدر ٹرمپ کی نیوز کانفرنس میں شام میں امریکا کی زیرقیادت رات کے وقت کی گئی کارروائی اور'داعش' کےسربراہ کی ہلاکت کے اعلان کے فورا بعد ہی وائٹ ہاؤس نے یہ تصاویر نشر کیں۔

ٹرمپ نے کہا کہ ڈی این اے ٹیسٹ کے نتائج سے معلوم ہوا ہے کہ یہ نعش بغدادی کی ہے۔

اُنہوں نے وضاحت کی کہ بغدادی کو اپنے تین بچوں کے ساتھ شمال مغربی شام میں مارا گیا تھا۔ اس نے خود کش جیکٹ کو دھماکے سے اڑا دیا تھا۔

ٹرمپ نے بتایا کہ البغدادی کے ساتھ دو خواتین بھی ہلاک ہوئیں۔انہوں نے دھماکہ خیز بیلٹ پہنے ہوئی تھیں۔ البغدادی کے 11 بچوں کو تیسرے فریق کے سپرد کردیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ البغدادی کے بعض ساتھیوں نے ہتھیار ڈال دیے تھے جنہیں گرفتار کرلیا گیا ہے۔