.

ریاض سیزن میں 15 سالہ سعودی پیانو آرٹسٹ لوگوں کی توجہ کا مرکز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب سے تعلق رکھنے والی 15 سالہ دالین خالد نے "پیانو" پر دھیمی اور خوب صورت دُھنوں کے ذریعے ریاض سیزن میں آنے والوں کے دل موہ لیے۔

لوگوں کی توجہ اور دل چسپی کا سامان پیدا کرنے والی پیانو آرٹسٹ نے العربیہ ڈاٹ نیٹ سے خصوصی گفتگو کی۔ دالین نے بتایا کہ "میں ریاض میں دسویں جماعت کی طالبہ ہوں۔ میں نے 8 ماہ قبل پیانو بجانا شروع کیا۔ مجھے اس کی آواز سے عشق ہے اور میری ہمیشہ سے یہ آرزو رہی کہ میں پیانو آرٹسٹ بنوں"۔

دالین کے مطابق اس کے لیے بہترین لمحہ وہ ہوتا ہے جب وہ لوگوں کے سامنے پیانو بجاتی ہے اور لوگوں کو اس کی دھنوں سے متاثر ہوتا دیکھتی ہے۔ دالین کو اس وقت ایک عظیم اور نہایت خوب صورت احساس ہوتا ہے اور لوگوں کی پسندیدگی پر وہ فخر محسوس کرتی ہے۔

دالین کا کہنا ہے کہ اسے اس سلسلے میں کسی مشکل سامنا نہیں ہوا۔ پیانو بجانے کے ذریعے اس نے بہت کچھ سیکھا جن میں صبر اور امتیازی فن پر اصرار کے علاوہ یکسوئی کی مہارت میں اضافہ، اطمینان و سکون، تعلیم اور اپنے اس شوق کے درمیان وقت کی تقسیم اور عوام کا اعتماد کے ساتھ سامنا کرنا شامل ہے۔

سعودی پیانو آرٹسٹ کے مطابق اس کے اہل خانہ کی جانب سے سب سے زیادہ سپورٹ حاصل ہوئی ... اور یہ ایک اہم سبب ہے کہ اس نے تیزی کے ساتھ اور مختصر عرصے میں موسیقی کے اس آلے کو بجانا سیکھ لیا۔