.

غزہ میں حماس کے وفد کو تعزیتی کیمپ سے نکال دیا گیا

حماس کے ارکان کی طرف سے ہوائی فائرنگ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

فلسطین کے جنگ سے تباہ حال علاقے غزہ کی پٹی میں وہاں کی حکمراں جماعت 'حماس' کے وفد کو تعزیتی کیمپ سے نکال دیا گیا۔ تعزیتی کیمپ میں موجود شہریوں نے حماس کے خلاف شدید نعری بازی کی جب کہ دوسری طرف جماعت کے وفد نے ہوائی فائرنگ کی۔ تعزیتی کیمپ میں آنے والوں میں حماس کے سینیر لینڈر محمود الزھار بھی شامل تھے۔

خیال رہے کہ گذشتہ منگل کو اسرائیلی فوج نے غزہ کی پٹی میں ایک فضائی حملے میں اسلامی جہاد کے عسکری ونگ "القدس بریگیڈ" کے کمانڈر بہا ابو العطا اور ان کی اہلیہ اسماء میزایل حملے میں قتل کردیا تھا۔

غزہ میں وزارت صحت نے ایک بیان میں کہا ہے کہ الشجاعیہ کالونی میں ایک خاتون سمیت دو شہری ہلاک اور تین زخمی ہوگئے۔

الشجاعیہ میں اسلامی جہاد کے کمانڈر کی یاد میں منعقدہ تعزیتی تقریب میں حماس کےوفد کی آمد پر وہاں پرموجود شہریوں نے حماس کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔

خیال رہے کہ منگل سے جمعرات کےدرمیان اسرائیلی فوج کی غزہ کی پٹی پر وحشیانہ یلغار کے نتیجے میں 35 فلسطینی شہید اور ایک سوسے زاید زخمی ہو گئے تھے۔

تازہ کشیدگی اس وقت پیدا ہوئی جب اسرائیلی فوج نے اسلامی جہاد کے کمانڈر ابو العطاء کو شہید کیا۔ اسرائیل ابو العطاء کو ایک انتہائی خطرناک کمانڈر قرار دیتا ہے۔ یہی وجہ ہےکہ اسرائیلی میڈیا میں انہیں'ٹائم بم' قرار دیا گیا۔