.

سعودی عرب میں کمرشل املاک پرٹیکس کے نفاذ کے بعد خلاف ورزیوں کے 9570 واقعات رپورٹ ہوئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں جنرل اتھارٹی برائے زکواۃ و آمدن کی طرف سے جاری ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سال 2018ء کے اوائل سے ملک بھرمیں کمرشل عمارتوں پر ویلیو ایڈڈ ٹیکس ٹیکس کے نفاذ کے بعد اس کی خلاف ورزیوں کے 9570 واقعات رپورٹ ہوئے ہیں۔

سعودی اخبار'الاقتصادیہ' کے مطابق جنرل اتھارٹی برائے زکواۃ و آمدن کی رپورٹ کے مطابق سال 2018ء میں ٹیکسوں کی عدم ادائی سے متعلق خلاف ورزیوں کی 15 ہزار شکایات موصول ہوئیں۔ ان میں سے 9 ہزار 570 واقعات کی تصدیق کی گئی ہے۔ یہ شکایات اتھارٹی کی طرف سے رابچہ چینل سے مستفید ہونے والے شہریوں کی جانب سے درج کرائی گئیں۔ ان میں زکواۃ اور دیگر ٹیکسوں سے متعلق شکایات شامل ہیں۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ویڈیو ایڈڈ ٹیکس کمرشل عمارتوں میں بالواسطہ طور پر ہرطرح کے سامان اور تجارتی سروسز پرلاگو ہوتا ہے۔

یہ رپورٹ ایک ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب گذشتہ اتوار کو سعودی اتھارٹٰ برائے زکواۃ و امدن کی طرف سے خلیج تعاون کونسل کے رکن ممالک کی طرف سے منظور کردہ ٹیکس پرعمل درآمد شروع کیا ہے۔ اس میں صحت کے لیے ضرر رساں سمجھے جانے والے مشروبات اور دیگر اشیاء شامل ہیں۔ اس سے قبل سعودی حکومت نے مقامی سطح پر تیار ہونے والے مشروبات پر ٹیکس میں 50 فی صد اضافہ کردیا تھا۔