جدہ : بین الاقوامی کتب نمائش میں وزارت داخلہ اور مکہ جیل ڈائریکٹریٹ کے ونگز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے ساحلی شہر جدہ میں بین الاقوامی کتب نمائش کے پانچویں ایڈیشن کا آغاز ہو گیا ہے۔ نمائش میں سعودی وزارت داخلہ بھی شرکت کر رہی ہے۔ وزارت کے ونگ میں جنرل ڈائریکٹریٹ آف پاسپورٹس، کنگ فہد سیکورٹی کالج، وزارت داخلہ کے زیر انتظام شہری احوال کی ایجنسی اور جیلوں کے جنرل ڈائریکٹریٹ شامل ہے۔

وزارت داخلہ کا ونگ نمائش میں آنے والوں کو شہری احوال اور پاسپورٹس سے متعلق متعدد خدمات فراہم کر رہا ہے۔ اس کے علاوہ شریک سیکٹروں سے متعلق افراد اُن سیکورٹی خدمات کا تعارف پیش کر رہے ہیں جو اُن کے سیکٹروں کی جانب سے شہریوں اور مقیمین کے لیے فراہم کی جاتی ہیں۔

اس سے قبل مکہ مکرمہ صوبے کی جیلوں کے ڈائرکٹریٹ نے بدھ کے روز جدہ کتب نمائش میں اپنے ونگ کا افتتاح کیا۔ اس ونگ میں صوبے کی جیلوں کے مرد اور خواتین قیدیوں کے ہاتھوں سے تیار کی گئی 60 سے زیادہ اشیاء رکھی گئی ہیں۔ ان میں فن پارے، تسبیحات، کنگن اور مجسمے وغیرہ شامل ہیں۔

مکہ مکرمہ صوبے کی جیلوں کے ڈائریکٹر بریگیڈیئر جنرل ماجد بن بندر الدرویش نے واضح کیا کہ ونگ میں رکھی جانے والی تمام اشیاء فروخت کے لیے پیش کی گئی ہیں۔ اس سلسلے میں فروخت سے حاصل ہونے والی تمام رقم متعلقہ مرد اور خواتین قیدیوں کے بینک کھاتوں میں جمع کرا دی جائے گی۔ انہوں نے باور کرایا کہ جیل انتظامیہ مذکورہ اشیاء کی تیاری کے لیے مطلوب تمام ساز و سامان اور خام مال فراہم کرنے کی ذمے داری نبھاتی ہے۔

الدرویش کے مطابق ان کے ونگ میں 42 سے زیادہ فن پارے اور 18 شو پیس رکھے گئے ہیں۔ ان کے علاوہ تسبیحات، کنگن، زنجیریں، کتابوں کے صفحات کے درمیان رکھنے کی نشانیاں اور دست کاری کی دیگر اشیاء بھی موجود ہیں۔ الدرویش نے بتایا کہ ونگ میں ایک دستاویزی شو کا بھی انتظام کیا گیا ہے۔ اس شو میں قیدی کے جیل میں داخل ہونے سے لے کر رہا ہونے تک کے مراحل کو دکھایا گیا ہے۔ اس میں جیلوں کے اندر شخصیت کی بحالی اور اصلاح سے متعلق تمام پروگراموں کا تعارف بھی شامل کیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں