کویتی پارلیمنٹ کے اسپیکر مرزوق الغانم پرحملے کا انکشاف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

کویت کی پارلیمنٹ (مجلس الامہ) کے اسپیکر مرزوق الغانم پر بدھ کے روز حملہ گیا تاہم وہ اس حملے میں محفوظ رہے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مرزوق الغانم نے بتایا کہ الصلیبخات قبرستان میں حملہ کرنے کی کوشش کی گئی تھی۔

انسٹا گرام پر پوسٹ ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ وہ حال ہی میں فوت ہونے والے ایک شہری کی فاتحہ خوانی کے لیے قبرستان میں گئے۔ جب وہ قبرستان سے باہر نکلنے لگے تو ایک شخص جسے وہ جانتے ہیں دو دیگر افراد کے ہمراہ ان کے قریب آیا۔ ان کا کہنا ہے کہ میں نے ان سے ہاتھ ملایا۔ جب میں نے تیسرے شخص سے مصافحہ کیا تو اس نے نا مناسب الفاظ استعمال کیے۔ میں نے اسے کہا کہ یہ بری بات ہے۔ اس کے بعد وہ وہاں سے نکلنے لگے اور ساتھ ہی ایک شخص نے اس پرحملہ کردیا تاہم وہاں پر کچھ اور لوگ بھی موجود تھے جنہوں ںے حملہ آوروں کو روک دیا۔

انہوں نے بتایا کہ قبرستان میں ان سے ملنے والے جس شخص کو وہ جانتے ہیں وہ عدنان تھا۔ اس کے ساتھ دو دیگر افراد کو وہ نہیں جانتے۔ جب انہوں نے تیسرے شخص سے مصافحہ کے لیے ہاتھ بڑھایا تو اس نے سلام کا جواب دینے کے بجائے بد کلامی شروع کردی۔جب میں نے اسے منع کیا تو اس نے ہاتھا پائی کی کوشش کی۔

انہوں نے سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی بعض پرانی فوٹیجز کو غلط قرار دیتے ہوئے شہریوں سے کہا ہے کہ وہ ان پرہونے والے حملے کے بارے میں افواہوں پرکان نہ دھریں۔ ان کا کہنا تھا کہ میں معمول کے مطابق قبرستان میں جاتا اور فاتحہ خوانی کرتا ہوں۔ اس سے قبل میرے ساتھ ایسا کوئی واقعہ پیش نہیں آیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں