.

'الریاض مڈل بیسٹ' موسیقی میلہ کامیابی کےجھنڈے گاڑنے کے بعد اختتام پذیر

میلے میں فن کاروں اور عالمی شخصیات سمیت 4 لاکھ افراد کی شرکت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے الریاض تفریحی اور سیاحتی سیزن کے دوران 'میڈل بیسٹ' کے عنوان سے منعقدہ ایک ثقافتی وموسیقی میلہ تین روز تک جاری رہنے اور کامیابی کے جھنڈے گاڑنے کے بعد اختتام پذیر ہوگیا۔ موسیقی میلے میں چار لاکھ افراد نے شرکت کی۔ یوں یہ میلہ اپنی نوعیت کے اعتبارسے نہ صرف سعودی عرب بلکہ خلیج اور عرب ممالک کا سب سے بڑا موسیقی میلہ قرارد یا گیا ہے۔ اس میں 100 بین الاقوامی شہرت یافتہ فن کاروں، گلو کاروں اورشوبز سے منسلک شخصیات، 'ڈی جے' اور معروف سعودی گلوکاروں نے شرکت کی۔

سعودی عرب میں موسیقی کے اعتبار سے یہ ایک بے مثال میلہ تھا۔ اسے نہ صرف اندرون بلکہ بیرون ملک سے بھی بڑے تعداد میں پذیرائی ملی اور اس میں شرکت کے لیے ایک کروڑ 60 لاکھ زائرین نے اپنی رجسٹریشن کرائی تھی۔

موسیقی میلے کے منتظمین کا کہنا ہے کہ اس تفریحی ایونٹ کے انعقاد کا مقصد سعودی عرب کے نوجوان مردو خواتین کو تفریح کا موقع فراہم کرنا اور ملک کی سماجی اور اقتصادی ترقی کے لیے نئے اقدامات متعارف کرانا ہے۔ سعودی عرب میں اس طرح کی سرگرمیوں سے ہزاروں شہریوں کے لیے ملازمت کے مواقع پیدا ہونے کے ساتھ ملکی معیشت کی خوش حالی، سعودی نوجوانواں کی صلاحیتوں میں اضافہ اور بحرانوں سے نمٹنے کی صلاحیت پیدا ہوگی۔

'میڈؒل بیسٹ' نامی ثقافتی میلے میں نہ صرف بیرون ملک سے زائرین نے شرکت کی بلکہ اندرون ملک سے بھی اسے بڑے پیمانے پر سراہا گیا۔ انتظمایہ کا کہنا ہے کہ اس طرح کے تفریحی ایونٹس کے انعقاد سے سعودی عرب کی فنون وثقافت کے حوالے سے عالمی سطح پر ساکھ بہتر ہوگی اور سعودی عرب میں آرٹس کے شعبوں میں مقامی اور غیرملکی سرمایہ کاری کے مواقع پیدا ہوں گے۔

میڈل بیسٹ میلے میں شرکت کرنے والوں میں عالمی شہرت یافتہ ڈی جے ڈیوڈ گیٹا، مارٹن گریکسن اور اسٹیو اوکی، سعودی فن کار راشد الماجد ، رابح صقر، عمرو دیاب، ماجد المہندس، محمد حماقی، موسیقاروں میں احمد العماری، اور کوزمیکات پہلی سعودی خاتون ہیں جنہوں نے اس میلے میں اپنے فن کا مظاہرہ کیا۔