.

سلیمانی پر ڈرون حملے سے کئی میزائل فائر ہوئے ۔۔۔ آپریشن کی تفصیلات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی اخبار نیویارک ٹائمز نے اپنی حالیہ اشاعت میں بتایا ہے کہ ایرانی پاسداران انقلاب کے القدس بریگیڈ کے سربراہ جنرل قاسم سلیمان کو ڈرون حملوں سے متعدد میزائل فائر کر کے قتل کیا گیا۔ میزائل دو گاڑیوں پر فائر کئے گئے جن پر قاسم سلیمانی اور دوسرے اعلیٰ ایرانی عہدیدار سوار تھے۔

امریکی خبر رساں ایجنسی ’’اے پی‘‘ نے سلیمانی کو قتل کئے جانے والی کارروائی کی بعض تفصیلات بیان کرتے ہوئے بتایا کہ آپریشن بغداد ہوائی اڈے کے کارگو سیکشن کے قریب کیا گیا۔ وہ لبنان سے بغداد آنے والی پرواز سے باہر نکلے ہی تھے کہ ڈرون حملہ کیا گیا۔

العربیہ اور الحدث کے نامہ نگاران کے مطابق عراق کے مقامی وقت رات گئے ایک بجے ڈرون حملہ کیا گیا۔ اطلاعات کے مطابق کارروائی میں چار ہل فائر میزائل داغے گئے، جن کی زد میں آ کر اعلیٰ ایرانی فوجی قیادت ہلاک ہوئی۔

العربیہ کے نمائندے کے مطابق عراقی حکومت نے امریکی ڈرون طیاروں کے ذریعے قاسم سلیمانی کو نشانہ بنانے سے متعلق کارروائی پر کسی قسم کا تبصرہ نہیں کیا، تاہم حکومت نے بغداد میں امریکی سفارتخانے کے اردگرد سیکیورٹی سخت کر دی ہے۔ حکام نے سفارتخانے کو ملانے والا معلق پل ہر قسم کی ٹریفک کے لئے بند کر دیا ہے۔