.

خطے میں جاری کشیدگی اور جارحیت میں کمی ضروری ہے: قرقاش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش کا کہنا ہے کہ خطے میں جاری حالیہ کشیدگی اور تناؤ میں کمی لانا ضروری ہے۔

بدھ کے روز اپنی ایک ٹویٹ میں انہوں نے اس بات کی ضرورت پر زور دیا کہ عدم جارحیت ایک دانش مندانہ موقف اور خطے کی اہم ترین ضرورت ہے۔

قرقاش کے مطابق خطے میں استحکام لانے کے لیے سیاسی راہ کو اپنانا لازم ہے۔

اس سے قبل ایرانی پاسداران انقلاب نے اعلان کیا کہ اس نے عراق میں انبار کے عین الاسد اور اربیل کے حریر فوجی اڈوں کو میزائل حملوں کا نشانہ بنایا ہے۔ دونوں اڈوں میں امریکی فوج موجود ہے۔ ایرانی سرکاری ٹی وی کے مطابق پاسداران کا کہنا ہے کہ واشنگٹن نے عراق میں امریکی اہداف پر ایرانی حملوں کا جواب دیا تو اس اقدام کا نیا رد عمل سامنے آئے گا۔

دوسری جانب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے بدھ کے روز کہا ہے کہ عراق میں امریکا کی دو عسکری تنصیبات پر ایرانی میزائل حملوں کے نتیجے میں ہونے والے نقصانات کا جائزہ لیا جا رہا ہے۔