.

سعودی عرب میں 'فارمیسی' کے پیشے کی مرحلہ وار 'لوکلائزیشن' کا فیصلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں وزیر محنت وسماجی بہبود انجینیراحمد الراجحی نے وزارت صحت کے ساتھ شراکت سے ایک وزارتی فرمان جاری کیا ہے جس میں فارمیسی پیشے کی بتدریج 'لوکلائزیشن' اور لیبرمارکیٹ کی تمام سرگرمیوں کو دو مراحل میں مقامی سطح پر فروغ دینے کی کوشش کی گئی۔پہلے مرحلے میں 20 فیصد مقامی لیبر کے حوالے کیا جائے گا۔ پہلے مرحلے میں 12/01/1441 ہجری تک 20 فی صد اوردوسرےمرحلے میں 01/12/1442 ہجری تک 30 فی صد لوکلائز کیا جائے گا۔

سعودی پریس ایجنسی "ایس پی اے" کے مطابق اس فیصلے کا اطلاق ان اداروں اور فارمیسیز پرہوگا جن میں کام کرنے والے غیرملکی فارمسسٹ کی تعداد پانچ یا زیادہ ہوگی۔ ایسی کمپنیاں جو فارمیسی پروڈکٹ مارکیٹینگ، ڈسٹری بیوشن، ڈرگز ایجنٹ اور وہ کارخانے جنہیں نومبر 2018ء کو فوڈ اینڈ ڈرگز اتھارٹی کی طرف سے لوکلائز کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے اس فیصلے میں شامل نہیں ہوں گی۔