.

شام: روس کا مسافر طیارہ ہنگامی طور پر حمیمیم کے اڈے پر اتر گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

روس کی وزارت دفاع کے اعلان کے مطابق روس کا ایک ایئربس - 320 طیارہ جس میں 172 مسافر سوار تھے ہنگامی طور پر شام میں حمیمیم کے فضائی اڈے پر اتر گیا۔ وزارت کا کہنا ہے کہ شامی حکومتی فورسز کے فضائی دفاعی نظام کی فائرنگ کے باعث طیارہ ہنگامی طور پر اترنے پر مجبور ہو گیا۔

روسی وزارت دفاع کے بیان میں بتایا گیا ہے کہ مسافر طیارہ شامی فضائی دفاعی نظام کی فائرنگ کا نشانہ بننے کے قریب تھا۔ طیارے کو روس کے زیر انتظام حمیمیم کے فضائی اڈے منتقل کر دیا گیا۔

بیان کے مطابق جمعرات اور جمعے کی درمیانی شب 2 بجے کے بعد اسرائیل کے چار ایف - 16 جنگی طیاروں نے شام کی فضائی حدود میں داخل ہوئے بغیر اچانک 8 میزائل داغ ڈالے۔ فضا سے زمین تک مار کرنے والے ان میزائلوں کے ذریعے دمشق کے نواحی علاقوں کو نشانہ بنایا گیا۔ اسرائیلی فضائیہ کے حملے کو روکنے کے لیے شامی فورسز نے فضائی دفاع نظام کا استعمال کیا۔

بیان میں واضح کیا گیا کہ دمشق کے نواحی علاقوں پر اسرائیلی لڑاکا طیاروں کے حملے کے وقت ،،، 172 مسافروں کے ساتھ ایک روسی Airbus-320 طیارہ دمشق کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر اترنے کی تیاری کر رہا تھا۔ تاہم فضائی نقل و حرکت کے خود کار نظام کی بدولت روسی مسافر طیارے کو کامیابی کے ساتھ فائرنگ زون سے نکال کر قریب ترین متبادل ہوائی اڈے یعنی حمیمیم کے روسی فضائی اڈے پر اتار لیا گیا۔

واضح رہے کہ جمعرات کو علی الصبح اسرائیلی فضائیہ نے دمشق اور اس کے دیہی علاقوں میں "شامی - ایرانی تعاون مراکز" کو نشانہ بنایا۔ اس کے نتیجے میں شامی حکومتی فورسز اور تہران نواز ملیشیاؤں کے 23 ارکان ہلاک ہو گئے۔