.

کویت : کرونا وائرس کے 43 کیس ،عسکری تعلیمی اداروں میں تدریسی سرگرمیاں معطل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

کویت میں کرونا وائرس کے تصدیق شدہ کیسوں کی تعداد 43 ہو گئی ہے اور یہ تمام متاثرہ افراد ایران سے آئے ہیں۔کویتی آرمی نے عسکری اداروں ، کالجوں اور اسکولوں میں یکم مارچ سے دوہفتے کے لیے تدریسی سرگرمیاں معطل کرنے کا اعلان کیا ہے۔ کویت کی سرکاری خبررساں ایجنسی کے مطابق یہ فیصلہ مہلک وائرس کرونا پھیلنے کے خدشے کے پیش نظر کیا گیا ہے۔

کویت کی وزارت صحت کے ترجمان عبداللہ السند نے جمعرات کے روز ایک پریس کانفرنس میں بتایا کہ ملک میں اس مرض کے پھیلاؤ پر روک لگانے کے لیے ہنگامی بنیادوں پر مختلف پروگراموں کو فعال کر دیا گیا ہے اور "ہم عالمی ادارہ صحت کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہیں"۔

ترجمان کے مطابق وزارت نے عالمی ادارہ صحت کی جانب سے ہدایت کردہ طبی قید کا اصول لاگو کر دیا ہے۔

پریس کانفرنس میں وزارت صحت کی ایک خاتون افسر نے بتایا کہ کرونا وائرس سے متاثر ہونے کے شبے میں مجموعی طور پر 1675 افراد کا معائنہ اور ٹیسٹ کیا گیا۔ ان میں 43 افراد کے اس وائرس سے متاثر ہونے کی تصدیق ہوئی ہے۔ تمام متاثرہ افراد کو علاج کے خصوصی مراکز میں الگ تھلگ رکھا گیا ہے۔

خاتون ذمہ دار نے باور کرایا کہ تمام متاثرہ افراد کی حالت بہتر ہے اور وہ سب رُو بہ صحت ہیں۔وزارت صحت نے وائرس سے متاثرہ علاقوں سے آنے والے تمام افراد پر کڑی نظر رکھی ہوئی ہے۔ انھوں نے تصدیق کی ہے کہ تمام متاثرہ افراد ایران سے آئے ہیں۔

کویتی حکومت کے رابطہ مرکز نے ٹویٹر پر اعلان کیا ہے کہ کابینہ کے خصوصی اجلاس کے بعد ملک میں تمام سرکاری اور نجی اسکولوں، کالجوں اور جامعات میں یکم مارچ 2020 سے دو ہفتے کی تعطیلات کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ اس فیصلے کا تعلیمی اداروں کے تمام طلبہ اور تدریسی عملہ پر اطلاق ہو گا۔