.

شامی حکومت کا اسرائیلی میزائل حملہ ناکام بنانے کا دعوی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام میں سرکاری میڈیا نے جمعرات کے روز علی الصبح بتایا ہے کہ شامی فوج کے فضائی دفاعی نظام نے ملک کے جنوب مغرب میں واقع صوبے القنیطرہ کی فضا میں اسرائیلی میزائلوں کا راستہ روک دیا۔

میڈیا نے ایک فوجی ذریعے کے حوالے سے بتایا کہ بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب 12:30 پر شامی فضائی دفاعی نظام نے اسرائیلی لڑاکا طیاروں کی نقل و حرکت کا پتہ چلایا۔ یہ طیارے مقبوضہ فلسطین کے شمالی حصے کی جانب سے لبنان کے شہرا صیدا کی سمت آ رہے تھے۔ اس دوران انہوں نے لبنانی فضاؤں کے اوپر سے وسطی علاقے کی جانب کئی میزائل داغے۔

مذکورہ ذریعے نے مزید بتایا کہ داغے گئے میزائلوں کو کامیابی کے ساتھ فضا میں ہی روک دیا گیا۔

یاد رہے کہ شام کی سرکاری خبر رساں ایجنسی SANA نے رواں سال فروری میں بتایا تھا کہ شامی فضائی دفاعی نظام نے دمشق کے بین الاقوامی ہوائی اڈے کے اطراف "دشمن کی جانب سے داغے گئے میزائلوں" کو مار گرایا۔ یہ میزائل مقبوضہ گولان کے پہاڑی علاقے سے داغے گئے۔

گذشتہ برسوں کے دوران اسرائیل نے شام پر سیکڑوں میزائل داغے۔ ان کارروائیوں میں شام میں ایران کے حمایت یافتہ مسلح گروپوں کو نشانہ بنایا گیا۔ ان کے علاوہ ایران نواز لبنانی ملیشیا حزب اللہ کی جانب سے بھیجے گئے عسکری ساز و سامان پر بھی حملے کیے گئے۔