.

لیبی فوج نے 24 گھنٹوں کے دوران ترکی کا دوسرا ڈرون طیارہ مار گرایا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لیبیا کی نیشنل آرمی نے منگل کے روز بتایا کہ اس نےجنوبی طرابلس میں قصر بن غشیر کے علاقے میں ترکی کا ایک اور مسلح ڈورن طیارہ مار گریا ہے۔ 24 گھنٹے میں لیبی فوج کے حملے میں تباہ ہونے والا ترکی کا یہ دوسرا ڈرون طیارہ ہے۔

العربیہ اور الحدثی چینل سے بات کرتے ہوئے لیبی فوج کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ معیتیقہ فوجی اڈے سےاڑائےگئے اس ڈورن طیارے کے ذریعے نیشنل آرمی کی تنصیبات کو بنانا تھا مگر اسے کارروائی سے قبل ہی مار گرایا۔ یہ واقعہ جنوبی طرابلس میں سوموار اور منگل کی درمیانی شب سامنے آیا۔

خیال رہے کہ لیبیا میں مصراتہ اور جنوبی شہر سرت میں نیشنل آرمی اور قومی وفاق حکومت کی وفادر ملیشیا کے درمیان گھمسان کی لڑائی جاری ہے۔ قومی وفاق حکومت کے حامی ترکی سے حاصل کردہ بھاری ہتھیار اور ڈرون طیاروں کا استعمال کرتی ہے۔

چند روز قبل لیبی فوج نے تیونس کی سرحد کے قریب علاقوں زلیطن، جمیل، رقدالین، وادی زمزم، بوقرین اور الھشہ کے علاقوں کو قومی وفاق حکومت سے چھین لیا تھا۔