.

کرونا کے سدباب کی خاطر سعودی فرمانروا نے کرفیو کی مدت میں تا حکم ثانی توسیع کر دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے فرمانروا خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے کرونا وائرس کا پھیلاو روکنے کے لیے مملکت بھر میں جاری کرفیو میں تا حکم ثانی توسیع کا حکم دیا ہے۔

العربیہ نیوز چینل نے وزارت داخلہ کے ذرائع کے ایک بیان کا حوالہ دیتے ہوئے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ شاہ سلمان نے اکیس دن کے لیے لگائے جانے والے کرفیو کی مدت ختم ہونے سے پہلے یہ حکم جاری کیا ہے۔

شاہ سلمان بن عبدالعزیزنے پیر 23 مارچ کو کرفیو لگانے کا حکم دیا تھا جس کی مدت ہفتے اور اتوار کی درمیانی شب ختم ہو رہی تھی۔ بیان کےمطابق کرفیو میں توسیع کے اقدام کا مقصد یہ یقینی بنانا ہے کہ کرونا وائرس کے پھیلاو کو مکمل کنٹرول میں رکھا جائے۔

یاد رہے کہ شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے کرونا وائرس کے پھیلاؤ کو کنٹرول کرنے، شہریوں اور غیر ملکی تارکین وطن کی صحت اور سلامتی کی خاطر پیر 23 مارچ کی شام سے 21 دن کے لیے مملکت بھر میں جزوی کرفیو نافذ کرنے کا حکم جاری کیا تھا۔ شاہی فرمان میں کہا گیا تھا کہ ’کرفیو روزانہ شام سات سے صبح چھ بجے تک 21 دن جاری رہے گا۔ شہریوں اور مقیم غیر ملکیوں کو ان کے اپنے تحفظ کے لیے کرفیو کے اوقات کے دوران اپنے گھروں میں رہنے کے لیے کہا گیا تھا۔

بعد ازاں پیر چھ اپریل کو محکمہ صحت کے حکام کی سفارش پر کئی شہروں میں تا حکم ثانی کرفیو 24 گھنٹے کرنے کااعلان کیا گیا تھا۔ دارلحکومت الریاض، دمام، تبوک، ظہران اور ہفوف، جدہ، طائف القطیف اور الخبر کمشنریوں میں کرفیو کا دورانیہ بڑھا کر24 گھنٹے کردیا گیا تھا- ان شہروں میں آمد ورفت بھی مستقل بنیادوں پر منع کردی گئی-

واضح رہے کہ سعودی عرب میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کرونا وائرس میں مبتلا مزید 382 مریضوں کی تصدیق ہونے کے بعد کرونا سے متاثر افراد کی مجموعی تعداد 4033 ہو چکی ہے۔