امارات نے مارچ میں ختم ہونے والے اقاموں میں دسمبر تک توسیع کر دی

آئڈنٹیٹی اینڈ سیٹزن شپ اتھارٹی نے فیصلہ عالمی وبا کے مضمرات سے بچانے کے لیے کیا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

کرونا وائرس کے پیش نظر متحدہ عرب امارات نے مارچ کے اوائل تک کارآمد اقامہ رکھنے تارکین وطن کے رہائشی پرمٹوں میں امسال دسمبر تک توسیع کا فیصلہ کیا ہے تاکہ عالمی وبا کے مضمرات سے اقامہ ہولڈرز کو بچایا جا سکے۔

آئڈنٹیٹی اینڈ سیٹزن شپ اتھارٹی کے ترجمان بریگیڈئر جنرل خمیس الکعبی کے مطابق اس سہولت سے یو ای اے سے باہر موجود کارآمد اقامہ رکھنے والے بھی استفادہ کر سکیں گے۔

انھوں نے بتایا کہ وزٹ ویزے پر یو ای اے آنے والے وہ غیر ملکی بھی اس سہولت سے فائدہ اٹھا سکیں گے جو امارات میں موجود تھے اور مارچ کے اوائل میں ان کا وزٹ ویزا ختم ہونے والا تھا۔ فیصلے کی روشنی میں ان کے وزٹ ویزے میں بھی دسمبر 2020 تک توسیع کی جا رہی ہے۔

بریگیڈئر جنرل الکعبی نے مزید بتایا کہ امارات میں ریڈنسی پرمٹ پر کام کرنے تارکین وطن کے ایمریٹس آئی کارڈ بھی اس سال کے اخری مہینے تک کارآمد ہوں گے۔

سفری پابندیاں

دو اپریل کو اماراتی حکام نے ملک سے باہر کارآمد اقامہ رکھنے والوں کے ایمریٹس میں داخلے پر عائد پابندی میں دو ہفتوں کے لئے مزید توسیع کر دی تھی۔

یو اے ای نے 17 مارچ کے بعد سے ملک آنے کے لیے ویزوں کا اجرا بند کر دیا تھا اور بیرون ملک مقیم اپنے شہریوں کو ہدایت کی تھی کہ وہ جلد از جلد ملک واپس لوٹیں تاکہ کرونا وائرس کی وجہ سے سفری پابندیوں کی زد میں آنے سے محفوظ رہ سکیں۔

تیئس مارچ کو یو اے ای نے دبئی آنے اور وہاں سے دنیا کے مختلف ملکوں کو جانے والی تمام مسافروں پروازیں دو ہفتوں کے لئے معطل کر دی تھیں۔

تاہم یو اے ای کی قومی پرچم بردار ایمریٹس اور اتحاد نامی فضائی کمپنیوں نے حال ہی میں امارات سے نکلنے کے خواہش مند افراد کے لئے بین الاقوامی پروازوں کا سلسلہ شروع کیا تھا۔

حکومت نے یو اے ای سے باہر کارآمد اقامہ رکھنے والے غیر ملکیوں کو ہدایت کی ہے کہ وہ متعلقہ وزارت کی ویب سائٹ پر خود کو رجسٹر کروائیں تاکہ ہنگامی صورت میں انہیں امارات واپسی میں سہولت فراہم کی جا سکے۔

مقبول خبریں اہم خبریں