.

یمن میں قیام امن کے لیے موقع غنیمت سمجھا جائے:قرقاش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش نے کل سوموار کو ایک بیان میں کہا ہے کہ موجودہ بحران کو یمن میں دیر پا امن کے قیام کے لیے غنیمت سمجھا جائے۔ ان کا کہنا ہے کہ یمن میں امن کے قیام کا بہترین موقع ملا ہے۔ اس موقعے کو ضائع نہیں ہونا چاہیے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ 'ٹویٹر' پرپوسٹ کردہ ایک بیان میں انور قرقاش نے کہا کہ سعودی عرب کی قیادت میں قائم عرب اتحاد کی طرف سے یمن میں جنگ بندی کا اعلان امن کو ایک اور موقع دینے کی کوشش ہے۔ خطے کےممالک اور عالمی برادری کو عرب اتحاد کےاس فیصلے کی حمایت کرنی چاہیے۔ ان کا کہنا تھا کہ موجودہ بحران اور اس کے نتیجے میں جنگ بندی یمن کے تنازع کے پرامن حل کا بہترین موقع ہے۔

انور قرقاش نے کہا کہ امن کے امکانات کو بڑھانے کے لیے اس موقع سے فائدہ اٹھانا چاہیئے۔ جنگ بندی کو کوئی فریق اپنی کارروائیوں کو آگے بڑھانے کے لیے استعمال نہ کرے۔

متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے امور خارجہ نے کہا کہ اتحادیوں نے جامع سیاسی حل تک پہنچنے کے لیے اپنی سنجیدگی کا مظاہرہ کیا ہے۔ حوثی ملیشیا کو بھی ایسا ہی کرنا چاہیے۔

ادھر یمن میں عرب اتحاد کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ جنگ بندی کے 48 گھنٹوں کے دوران یمن کے حوثی باغیوں نے جنگ بندی کی 241 بار خلاف ورزی کی ہے۔