.

ایران کا بحری میزائلوں کی رینج 700 کلو میٹر تک بڑھانے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایرانی پاسداران انقلاب کے نیول کمانڈر علی رضا تنکسیری نے ایک بیان میں کہا ہے کہ گذشتہ ہفتے شمالی خلیج عرب میں امریکی بحری جہازوں اور امریکی کشتیوں کے درمیان تصادم اور اس کے نتیجے میں پیدا ہونے والی کشیدگی کے بعد تہران سمندر میں میزائلوں کی رینج کو 700 کلو میٹر تک بڑھانے میں کامیاب ہوگیا ہے۔

ایران کی 'تنسیم' نیوز ایجنسی نے 'سپاہ نیوز' ویب سائٹ کے حوالے سے بتایا کہ ایران نے سمندر میں پانی کے اپرتیرنے والی 55 میٹرطویل موٹر کشتی، جنگی کشتیاں اور ایئرکرافٹ بھی تیار کیے ہیں۔

ایرانی نیول عہدیدار تنکسیری کا کہنا ہے کہ خطے میں امریکیوں کی موجودگی امن کو تاراج کررہی ہے۔ ان کا اشارہ حال ہی میں ایرانی پاسدران انقلاب کی ایک جنگی کشتی اور امریکی بحری جہاز کے درمیان ہونے والے تصادم کی طرف تھا۔

انہوں نے الزام عاید کیا کہ سمندر میں موجود کشتیوں کے درمیان تصام کا ذمہ دار امریکا ہے جو بین الاقوامی قوانین کی سنگین خلاف ورزیوں کا مرتکب ہو ہا ہے۔ ہم نے یڈیو ٹرانسمیشن کے ذریعے امریکیوں کوآگے بڑھنے سےروکا مگر انہوں نے ہماری وارننگ پرکوئی توجہ نہیں دی۔

خیال رہے کہ گذشتہ بدھ کو امریکی بحریہ نے کہا تھا کہ شمالی خلیج عرب کے پانیوں میں ایرانی کشتیوں کی طرف سے خطرناک اشتعال انگیزی کا مظاہرہ کیا گیا تھا۔