اسرائیلی فوج شام اور لبنان کی سرحد پر جنگ کے لیے تیار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

حالیہ مہینوں میں اسرائیلی فوج نے لبنان اور شام کی سرحد پر واقع شمالی علاقے میں جنگی صورت حال کے تناظرمیں عسکری سرگرمیاں بڑھا دی ہے۔ صہیونی فوج کاکہنا ہے کہ وہ شام اور لبنان کی سرحد پر کسی بھی ٹکرائو یا جنگ کے لیے تیار ہے۔

فوج کے جاری کردہ ایک بیان کے مطابق شمالی سرحد پر تعینات فوجی یونٹیں کسی بھی خطرناک منظر نامے سے نمٹںے کے لیے خود کو تیار رکھے ہوئےہیں۔ فوج سرحد پرموجود سڑکیں کھولنے، سیکیورٹی کے حوالے سے رکاوٹیں بڑھانےاور فیلڈ میں جنگ کے لیے تیار رہنے کی بھرپور تیاری کررہی ہے۔

بیان کے مطابق فیلڈ آرگنائزیشن کے شعبے میں حالیہ مہینوں میں شمالی سرحدوں پر انجینئرنگ یونٹیں وسیع کام ہو چکی ہیں۔ جنگی تیاریوں کا سلسلہ اب بھی ہو رہے ہیں۔ اس فریم ورک کے تحت ، سرنگ کو پتا چلانے اور ان کی نگرانی کے لیے جدید وسائل ،سینسر کے استعمال اور دیگر آلات کی تنصیب شامل ہے۔ اس کے علاوہ فوج شام اور لبنان کی سرحد پر ممکنہ محاذ آرائی کی صورت میں تربیتی مشقیں بھی کرچکی ہے۔

حال ہی میں لبنان اور شام کی سرحد پر جنگ کے تناظرمیں 72 گھنٹے کی مشقیں کی گئیں۔ شام کی سرحد پر وادی گولان میں پیادہ فوج، آرٹلری اور انجینیرنگ اسکواڈ میں اضافہ کردیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں