.

لیبی مفتی کا مخالف فوج کے قیدیوں کو قتل کرنے فتویٰ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لیبیا میں قومی وفاق حکومت کے ایک برطرف مفتی اور متنازع عالم دین الصادق الغریانی نے قومی وفاق حکومت کی وفادار ملیشیا کی قید میں موجود نیشنل آرمی کے فوجیوں کو قتل کرنے کا فتویٰ صادر کیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق علامہ الغریانی نے اپنے ایک ویڈیو پیغام میں کہا کہ نیشنل آرمی کے گرفتاری فوجیوں کے ساتھ تاتاریوں اور منگولوں کا سلوک کیا جائے۔ ان پر اللہ کی شریعت کا نفاذ جائز نہیں اور نہ ہی یہ اسلامی قانون کے تحت مسلمان قیدیوں کے دائرے میں آتے ہیں۔ ان پر دوسرے قوانین کا اطلاق ہونا چاہیے۔

الغریانی کا مزید کہنا تھا کہ قومی وفاق حکومت کی وفاداری میں لڑنے والے عسکری گروپ غنیمت حاصل کرنے کے حق دار ہیں۔ ان کا حاصل کردہ مال غنیمت حکومت کو نہیں لینا چاہیے۔

ادھر اسی سیاق میں اقوام متحدہ نے ایک رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ لیبیا میں قومی وفاق حکومت کی وفادار ملیشیائوں نے دس ہزار سے زاید افراد کو پابند سلاسل کررکھا ہے۔