مصری یونیورسٹی میں امتحان کے دوران طلبا میں روبوٹ کے ذریعے سوالیہ پرچہ تقسیم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مصر میں ایک یونیورسٹی نے امتحانات میں شامل ہونے والے طلبا کو نقل سے بچانے کے لیے کمرہ امتحان میں روبوٹ تعینات کرنے اور سوالیہ پرچہ روبوٹ کی مدد سے طلبا میں تقسیم کرنے کا نیا طریقہ کار اختیار کیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مصر کی سوئز کینال یونیورسٹی کے اکائونٹس اینڈ انفارمیشن کالج کے زیراہتمام ہونے والے امتحانات کے لیے روبوٹ کی مدد سےسوالیہ پرچہ تقسیم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

کالج کی جنرل سپر وائز اور وائس چیئرپرسن ڈاکٹر ماجدہ ھجرت نے بتایا کہ روبوٹ کی مدد سے سوالیہ پرچہ تقسیم کرنے کا مقصد طلبا اور نگران حضرات کےدرمیان بات چیت اور نقل کے امکانات کو روکنا ہے۔

یہ رپورٹ مصری طلبا نےخود ہی تیار کیا ہے۔ ملٹی ٹاسکنگ روبوٹ کو موبائل ایپلی کیشنز کے ذریعہ کنٹرول کیا جاتا ہے۔ تعلیم اور طلباء کے امور کے لیے کالج کے نائب اور پروجیکٹ سپروائزر ڈاکٹر غادہ الطویل نے بتایا ہے کہ روبوٹ کھانا یا دوا مہیا کرسکتا ہے۔ اسے آی سولیشن میں رکھے مریضوں تک کھانا پہنچانے کے بھی استعمال میں لایا جاسکتا ہے۔

روبوٹ تیار کرنےوالی ایگزیکٹو ٹیم میں کمپیوٹر سائنس کے تیسرے سال طالب علم محمد عبد اللہ خلف اللہ ،عمار احمد ابراہیم سالم اور کامل حسن کامل سلیمان شامل ہیں

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں