.

ایران میں 2.5 کروڑ شہری کرونا سے متاثر ہوئے : حسن روحانی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایران کے صدر حسن روحانی نے انکشاف کیا ہے کہ ملک میں 2.5 کروڑ شہری کرونا وائرس سے متاثر ہوئے جب کہ قریبا 3.5 کروڑ کو متاثر ہونے کا خطرہ لاحق ہے۔

ہفتے کے روز روحانی کی جانب سے جاری بیان ایرانی وزارت صحت کی نئی رپورٹ میں شامل اعداد و شمار پر مبنی ہے۔ یہ تعداد سرکاری طور پر اعلان کردہ متاثرین کی تعداد 269440 سے کہیں زیادہ ہے۔ ایرانی صدر نے اپنے خطاب میں اس واضح تضاد پر روشنی نہیں ڈالی۔

ایران کی کُل آبادی 8 کروڑ نفوس پر مشتمل ہے۔ یہ مشرق وسطی میں کرونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والا ملک ہے۔

سرکاری ٹی وی پر نشر ہونے والے خطاب میں حسن روحانی کا کہنا تھا کہ "ہمارے اندازے کے مطابق اب تک 2.5 ایرانی اس وائرس سے متاثر ہو چکے ہیں ، ان میں تقریبا 14 ہزار متاثرین اپنی قیمتی جانوں سے ہاتھ دھو چکے ہیں"۔

ایرانی صدر کے مطابق ملک میں 3 سے 3.5 کروڑ افراد کو ممکنہ طور پر کرونا سے متاثر ہونے کا خطرہ لاحق ہے۔

روحانی نے مزید بتایا کہ ملک کے ہسپتالوں میں 2 لاکھ سے زیادہ افراد کا علاج کیا جا چکا ہے۔

ایرانی وزارت صحت کے مطابق جمعے کے روز تک ملک میں کرونا وائرس کے سبب 13791 افراد فوت ہو چکے ہیں۔

واضح رہے کہ دنیا بھر میں کرونا وائرس کے مصدقہ کیسوں کی تعداد 1.4 کروڑ سے تجاوز کر گئی ہے۔ روئٹرز نیوز ایجنسی نے ہفتے آج ہفتے کے روز بتایا کہ یہ پہلا موقع ہے جب 100 گھنٹوں سے بھی کم دورانیے میں عالمی سطح پر دس لاکھ نئے متاثرین کا انکشاف ہوا ہے۔

دنیا میں کرونا وائرس کا پہلا کیس رواں سال جنوری کے اوائل میں چین میں سامنے آیا تھا اور پھر اگلے تین ماہ میں کیسوں کی مجموعی تعداد 10 لاکھ تک پہنچ گئی۔ بعد ازاں 13 جولائی کو متاثرین کی تعداد 1.3 کروڑ تھی جو اگلے صرف چار روز میں بڑھ کر 1.4 کروڑ تک پہنچ گئی۔