.

عراق: فوجی اڈے پر واقع اسلحہ ڈپو میں گولہ بارود پھٹنے سے شدید دھماکے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراق کے دارالحکومت بغداد کے نواح میں ایک فوجی اڈے پر مبیّنہ طور پر میزائل پھٹنے سے شدید دھماکے ہوئے ہیں لیکن فوری طور پر ان دھماکوں میں کسی شخص کے ہلاک یا زخمی ہونے کی اطلاع ملی ہے۔

ابتدائی طور پر عراقی فوج کے الدورہ کے نزدیک واقع معسکر الصقر پر دھماکوں کی اطلاع ملی تھی۔اس کے بعد عراقی میڈیا سکیورٹی سیل نے ایک بیان میں کہا ہے کہ پولیس کے ایک گودام میں رکھا گولہ بارود شدید درجہ حرارت کی وجہ سے دھماکوں سے پھٹ گیا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ پولیس کے گودام میں اس گولہ بارود کو مناسب طریقے سے ذخیرہ نہیں کیا گیا تھا۔محکمہ شہری دفاع نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر امدادی کارروائی شروع کردی ہے۔

بغداد میں اتوار کی شام متعدد دھماکوں کی آوازیں سنی گئی ہیں۔سکیورٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ فوجی اڈے پر اسلحہ ڈپو پولیس اور نیم فوجی سکیورٹی فورسز دونوں کے زیر استعمال ہے۔

یادرہے کہ اس ڈپو میں گذشتہ سال اگست میں بھی دھماکوں کے بعد آگ لگ گئی تھی۔ تب بھی بغداد بھر میں گولہ بارود پھٹنے سے دھماکوں کی آوازیں سنی گئی تھیں۔اس واقعہ میں ایک شخص ہلاک اور 29 زخمی ہوگئے تھے۔