.

انبار میں داعش تنظیم کا حملہ ، عراقی فوج کا سینئر کمانڈر ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراقی فوج کے اعلان کے مطابق 29 ویں بریگیڈ کے کمانڈر بریگیڈیئر جنرل احمد عبدالواحد محمد اللامی مغربی صوبے الانبار میں دہشت گرد تنظیم داعش کے حملے میں ہلاک ہو گئے۔

یہ بات منگل کی شب مشترکہ آپریشنز کی کمان کی جانب سے جاری ایک بیان میں بتائی گئی۔

بیان کے مطابق منگل کی شام ہیت ضلع کے علاقے العکبہ میں داعش کے اس حملے میں اللامی کے علاوہ فوج کا ایک لیفٹننٹ بھی اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھا۔ اس دوران دہشت گرد تنظیم کے دو جنگجو زخمی ہوئے۔

یاد رہے کہ داعش تنظیم نے عراقی سیکورٹی مقامات پر کئی مسلح حملے کیے ہیں۔ ان کارروائیوں میں متعدد افراد ہلاک و زخمی ہوئے۔ عراقی وزارت داخلہ میں انٹیلی جنس کے ڈائریکٹر جنرل اور انسداد دہشت گردی یونٹ کے سربراہ ابو علی البصری نے چند روز قبل انکشاف کیا تھا کہ داعش تنظیم کی جانب سے بصرہ اور دیگر صوبوں میں دہشت گردی کا ایک "خطر ناک" منصوبہ ناکام بنا دیا گیا۔

دوسری جانب عراق میں بین الاقوامی اتحاد کے نائب کمانڈر امریکی جنرل کینیتھ ایکمین نے گذشتہ بدھ کے روز پینٹاگان میں وڈیو کے ذریعے ایک پریس کانفرنس کے دوران کہا تھا کہ "اگر بین الاقوامی اتحاد یہ جانتا بھی ہے کہ داعش تنظیم پر مکمل طور قابو نہیں پایا جا سکے گا تب بھی تنظیم کے مضمحل ہونے سے ہمیں عراق میں اپنے عسکری وجود کو کم کرنے کا موقع مل گیا"۔ امریکی جنرل کے مطابق داعش تنظیم کو دیہی علاقوں تک میں پناہ حاصل کرنے میں دشواری کا سامنا ہے۔ تنظیم کی قیادت، مالی حالت، لوجسٹکس اور ذرائع ابلاغ کی صورت حال پہلے جیسی نہیں رہی۔