سانحہ بیروت: ڈچ سفیر کی اہلیہ کی موت نے دو افراد کو زندگی بخش دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

گذشتہ ہفتے لبنان کے دارالحکومت بیروت میں ہونے والے خونی دھماکوں میں ہلاک ہونے والی ڈچ سفیر جان والٹ مینس کی اہلیہ 55 سالہ ہیڈ وِگ وٹمس مولر اپنی موت سے دو افراد کی زندگی بچانے میں مدد کی ہے۔

مرنےسے پہلے ڈچ سفیر کی اہلیہ نے اپنے گردے عطیہ کرنے کی وصیت کی تھی اور کہا تھا کہ اگر کسی مریض کو اس کے گردوں کی ضرورت پڑے تو میر مرنے کے بعد میرے گردےاسے عطیہ کر دینا۔

سوشل میڈیا پر سماجی کارکنوں کا کہنا ہے کہ آنجہانی مولیر جو زخموں کی تاب نہ لاتےہوئے ہفتے کے روز انتقال کر گئی تھیں نے اپنے اعضاء کی ایک بڑی تعداد عطیہ کی۔ اس کے گُردے دو الگ الگ مریضوں کو لگائے گئے ہیں جس سے ان کی زندگی بچ گئی ہے۔

منگل کے روز بیروت کی بندرگاہ پر ہوئے بڑے پیمانے پر دھماکے میں شدید زخمی ہونے کے بعد لبنان میں ہالینڈ کے سفیر کی اہلیہ ہفتہ کے روز فوت ہو گئی تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں