لبنان کی ہرحکومت حزب اللہ کو غیر مسلح کرنے کی پابند ہو گی: امریکا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں امریکی مندوب کیلی کرافٹ نے منگل کے روز العربیہ کے ساتھ ایک انٹرویو میں کہا ہے کہ لبنان کی کوئی بھی حکومت حزب اللہ کو اسلحہ کے حصول سے باز رکھنے کی پابند ہو گی۔ ان کا کہنا تھا کہ اقوام متحدہ کی لبنان میں تعینات امن فوج ' UNIFIL' جنوبی لبنان میں اپنا مشن جاری رکھے گی۔

کرفٹ نے مزید کہا کہ ہم ایک اہم ڈونر ملک ہیں اور ہم ہمیشہ لبنان کے شانہ بشانہ کھڑے رہے ہیں۔ لبنانی عوام ایک بہتر مستقبل کے مستحق ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ایران خطے کو غیر مستحکم کرنے کے لیے ہتھیاروں کے استعمال کا سہارا لے گا۔ کرافٹ نے ایران پر زور دیا کہ وہ سابق لبنانی حکومت کا حصہ رہنے والی شیعہ ملیشیا حزب اللہ کو مسلح کرنا بند کرے۔

کرافٹ نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ ایران پر اسلحہ کی پابندی میں توسیع کے مسودے پر رائے شماری اگلے ہفتے ہی ہوگی۔ سلامتی کونسل کے ممالک کو دہشت گردی یا امن کی حمایت میں سے کسی ایک کا انتخاب کرنا ہوگا۔

کرافٹ نے مزید کہا کہ واشنگٹن ایران پر اسلحہ کی پابندی کی تجدید کے لیے تمام اقدامات کرے گا۔ انہوں‌ نے ایران پر اسلحہ کی پابندی کے بارے میں خلیج تعاون کونسل کے اصولی موقف پر ' جی سی سی' کا شکریہ ادا کیا۔

سلامتی کونسل میں امریکی مندوب نے وضاحت کی کہ ٹرمپ انتظامیہ ایران پر اسلحہ کی پابندی میں توسیع نہ کرنے کے خدشات سے بخوبی آگاہ ہے۔ اسلحہ کے پابندی سے متعلق ایرانی مؤقف کو بکواس قرار دیا۔

انہوں نے اشارہ کیا کہ ناکامی امریکا کے لیے کوئی آپشن نہیں ہے۔ انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ ایران کے ساتھ نمٹنے کے لیے واشنگٹن کے پاس بہت سے آپشنز موجود ہیں۔ ان کا اشارہ ایران پر نئی اقتصادی پابندیوں اور ممکنہ فوجی کارروائی کی طرف تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں