.

شام میں "تیفور" کے فوجی ہوائی اڈے پر اسرائیلی حملہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیل نے شام کے صوبے حمص میں "تیفور" کے فوجی ہوائی اڈے کو نشانہ بنایا ہے۔ یہ بات "العربيہ" اور "الحدث" کے نمائندے نے بدھ کی شب بتائی۔

شامی حکومت کے میڈیا کے مطابق شام کے فضائی دفاعی نظام نے مذکورہ ہوائی اڈے کی سمت داغے جانے والے اسرائیلی میزائلوں کا راستہ روکا اور ان میں زیادہ تر حمص صوبے میں گرے۔

شام کی سرکاری خبر رساں ایجنسی SANA نے شامی عسکری ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ حملوں میں صرف مادی نقصان ہوا۔ ادھر روئٹرز نیوز ایجنسی کے مطابق اسرائیلی فوجی ترجمان نے اس واقعے پر تبصرہ کرنے سے انکار کر دیا۔

میزائلوں کا یہ حملہ اسرائیل کی اس بم باری کے ایک روز بعد سامنے آیا جس میں شامی فورسز کے ہمنوا 10 جنگجو مارے گئے تھے۔ یہ بات شام میں انسانی حقوق کے نگراں گروپ المرصد نے بتائی۔ اس سے قبل دمشق حکومت نے پیر کی شب تاخیر سے اعلان کیا تھا کہ جنوبی علاقے میں اسرائیلی بم باری کے نتیجے میں دو افراد ہلاک اور سات شامی فوجی زخمی ہو گئے۔

المرصد کے مطابق بم باری میں دمشق کے جنوب مغرب میں شامی افواج کے ٹھکانوں اور درعا کے شمالی دیہی علاقے میں شامی فوج کے ہمنوا گروپوں کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا گیا۔ ان گروپوں میں لبنانی ملیشیا حزب اللہ شامل ہے۔