.

نجران کی سمت بھیجا جانے والا حوثیوں کا ڈرون طیارہ فضا میں تباہ کر دیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں آئینی حکومت کی سپورٹ کرنے والے عرب اتحاد کی مشترکہ فورسز کی کمان نے اعلان کی ہے کہ ایران کی حمایت یافتہ دہشت گرد حوثی ملیشیا کی جانب سے سعودی عرب کے شہر نجران کی سمت بھیجے جانے والے دھماکا خیز ڈرون طیارے کو تباہ کر دیا گیا۔

عرب اتحاد کے سرکاری ترجمان کرنل ترکی المالکی نے اپنے بیان میں بتایا کہ مشترکہ اتحادی فورسز جمعرات کی صبح ایک ڈرون طیارے کو فضا میں تباہ کرنے میں کامیاب ہو گئیں۔ دھماکا خیز مواد کے حامل اس ڈرون کو دہشت گرد حوثی ملیشیا نے دانستہ طور پر سعودی عرب کے شہر نجران کی سمت بھیجا تھا تا کہ شہریوں کو نشانہ بنایا جا سکے۔

اس سے قبل کرنل ترکی المالکی نے منگل کے روز یہ اعلان کیا تھا کہ مشترکہ اتحادی فورسز نے آج صبح سعودی عرب کے جنوبی علاقے کی سمت دہشت گرد حوثی ملیشیا کی جانب سے بھیجا جانے والا ایک ڈرون طیارہ مار گرایا۔ دھماکا خیز مواد سے بھرے اس ڈرون طیارے کو بھیجنے کا مقصد مملکت میں شہریوں کو دانستہ طور پر نشانہ بنانا تھا۔

المالکی نے باور کرایا تھا کہ دہشت گرد حوثی ملیشیا کو منہ توڑ جواب دینے کے لیے اقدامات کا سلسلہ جاری رکھا جائے گا۔ اتحاد نے زور دیا تھا کہ وہ بین الاقوامی قانون کے مطابق دہشت گرد کارروائی میں ملوث افراد کے احتساب کا ارادہ رکھتا ہے۔