.

فلسطینی عوام کی سپورٹ کے پابند ہیں : امارات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ شیخ عبداللہ بن زائد آل نہیان نے فلسطینی عوام کے لیے امارات کی طویل مدت اور مسلسل سپورٹ کو باور کرایا ہے۔

اماراتی سرکاری خبر رساں ایجنسی (وام) کے مطابق شیخ عبداللہ نے یہ بات اپنے امریکا کے دورے کے اختتام پر امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو اور کانگرس کے متعدد رہ نما اور ارکان سے ملاقات کے دوران کہی۔ اس موقع پر انہوں نے اماراتی اسرائیلی امن معاہدے کو مضبوط بنانے کے راستوں پر زور دیا۔ ان میں فلسطینی اراضی کے انضمام کا روکا جانا اور مشرق وسطی کے تمام علاقوں میں تبدیلی کے واسطے ایک نئی مثبت توانائی کی تلاش میں کردار ادا کرنا شامل ہے۔

ملاقات میں دو طرفہ تعلقات اور دونوں ملکوں کے درمیان تعاون کے ذریعے مشترکہ طور پر پابند رہنے پر تبادلہ خیال ہوا۔ اس سلسلے میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے انسداد کی کوششیں ، خلیج عربی میں امن و امان کی مضبوطی اور علاقائی استحکام کو متزلزل کرنے والے خطرات کا بھرپور جواب جیسے موضوعات بھی زیر بحث آئے۔

یاد رہے کہ متحدہ عرب امارات اور بحرین نے منگل کے روز وائٹ ہاؤس میں اسرائیل کے ساتھ امن معاہدے پر دستخط کیے تھے۔ دستخط کی تقریب کے بعد اماراتی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ اس معاہدے کے ذریعے ان کا ملک فسطینیوں کی زیادہ مدد کر سکے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ "یہ معاہدہ امریکا ، اسرائیل اور امارات کے لیے ایک تاریخی کامیابی ہے"۔

مذکورہ امن معاہدوں کے تحت امارات اور بحرین اسرائیل کے ساتھ سفارتی، تجارتی اور اقتصادی تعلقات قائم کریں گے۔ یہ معاہدے ایرانی خطرات اور ترکی کے توسیع پسندی کی خواہشات کے خلاف غیر سرکاری اتحاد کو مضوبط بنائیں گے۔ ساتھ ہی امارات کے لیے جدید امریکی اسلحے کے سمجھوتے حاصل کرنے کی راہ بھی ہموار ہو گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں