.

اکتوبر میں'اوپیک پلس' کا اجلاس بلایا جاسکتا ہے: سعودی وزیر پٹرولیم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے وزیر برائے پٹرولیم شہزادہ عبدالعزیز بن سلمان نے کہا ہے کہ تیل کی طلب میں کمی کی صورت میں آئندہ ماہ اکتوبر میں تیل پیدا کرنے والے ممالک کی تنظیم 'اوپیک پلس' کا اجلاس بلایا جا سکتا ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ کرونا کی وبا کی دوسری لہر کے خطرات کے نتیجے میں تیل کی طلب متاثر ہو سکتی ہے۔ اگر ایسا ہوتا ہے تو تیل پیدا کرنے والے ممالک کو پٹرولیم مصنوعات پر سبسڈی کے حوالے سے اقدامات کے لیے صلاح مشورہ کرنا ہو گا۔

ادھر کل ہفتے کے روز لیبیا میں اس وقت تیل کےحوالے سے اہم پیش رفت سامنے آئی جب لیبیا کی فوج کے سربراہ خلیفہ حفترنے کہا تھا کہ انہوں نے لیبیا کی تمام آئل فیلڈز سے تیل کی فراہمی کی اجازت دی دے ہے تاہم اس اعلان پر عالمی منڈی میں تیل کی ترسیل اور اس کی قیمت پر کوئی زیادہ اثر نہیں پڑا۔

تیل کی ہفتہ وار قیمت میں 15 سنٹ کمی کے بعد 34 اعشاریہ 15 ڈالر فی بیرل تک آگئی جب کہ ہفتے میں تیل کی مارکیٹ میں 8 اعشاریہ 3 فی صد کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔