.

عرب اتحادی فوج نے حوثیوں کی دو بمبار کشتیاں تباہ کر دیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں آئینی حکومت کے دفاع کے لیے قائم عرب اتحادی فوج نے کل بدھ کو بحر احمر میں حوثی باغیوں‌ کی دہشت گردی کے مقاصد کے لیے بھیجی گئی دو بمبار کشتیاں تباہ کر کے دہشت گردی کی سازش ناکام بنا دی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق عرب اتحادی فوج کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے بتایا کہ حوثی باغیوں‌ نے دو بمبار کشتیوں کے ذریعے خطے میں دہشت گردی کی ایک نئی سازش تیار کی تھی تاہم اتحادی فوج نے بروقت کارروائی کر کے دونوں‌ کشتیوں کو تباہ کر دیا۔

ترجمان نے بتایا کہ دونوں‌ بمبار کشتیوں‌ کو یمن کے ساحلی شہر الحدیدہ سے روانہ کیا گیا تھا۔

ایک سوال کے جواب میں المالکی نے کہا کہ حوثیوں کی طرف سے بحر احمر میں عالمی تجارتی قافلوں اور بین الاقوامی امن کو تباہ کرنے دانستہ سازشیں کی جا رہی ہیں۔ بمبار کشتیوں کے ذریعے دہشت گردی کی کوشش بھی انہی سازشوں کا حصہ ہے۔

کرنل ترکی المالکی نے بتایا کہ حوثی ملیشیا نے الحدیدہ شہر کو بیلسٹک میزائلوں، ڈرون طیاروں اور بمبار کشیتوں کے ذریعے خطے کا امن تباہ کرنے کی سازشیں شروع کررکھی ہیں اور وہ الحدیدہ کو اپنے دہشت گردانہ مقاصد کے لیے استعمال کررہے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ بمبار کشتیوں اور ڈرون طیاروں‌کے ذریعے حملوں کی کوشش اقوام متحدہ کے زیرنگرانی یمن میں جنگ بندی کے حوالے سے اسٹاک ہوم میں طےپانے والے معاہدے کی کھلی خلاف ورزی ہیں۔