شام میں‌ جبل مانع میں اسرائیل کے تازہ فضائی حملے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

شامی ذرائع ابلاغ کے مطابق اسرائیلی جنگی طیاروں نے منگل اور بدھ کی درمیانی شب جنوبی علاقے قنطیرہ میں فضائی حملے کیے ہیں۔

شامی رجیم کی نیوز ایجنسی "سانا" نے اطلاع دی ہے کہ اسرائیلی فوج کی فوج نے شام میں قنیطرا کے جنوب میں جبل المانع پر فضائی حملے کیے۔

ادھر اسرائیلی فوج کے ایک ذریعے نے بھی جنوبی دمشق میں القنیطرہ میں جبل المانع کے نواح میں فضائی حملے کیے۔ تاہم اس حملے میں کسی قسم کا جانی نقصان نہیں ہوا ہے۔

شامی حکومت کے سرکاری ٹی وی نے ایک ویڈیو کلپ شائع کیا ہے جس میں شام کے فضائی دفاع کی جانب سے دمشق کے دیہی علاقوں میں جبل المانع کے اطراف میں اسرائیلی طیاروں کی بمباری کے دوران جوابی فائرنگ کو دکھایا گیا ہے۔

چند روز قبل اسرائیلی فوج نے شام میں ایرانی قدس فورس اور حکومتی فورسز پر فضائی حملے کیے تھے۔ اس کے علاوہ مقبوضہ وادی گولان کی پہاڑیوں شمالی سرحد پر اسرایلی فوج کی بھاری نقل وحرکت یکھی گئی۔

بدھ کے روز'العربیہ' کے نامہ نگارنے اطلاع دی کہ اسرائیل نے شمالی سرحد پر متعدد آئرن ڈوم بیٹریاں تعینات کی ہیں۔ یہ پیش رفت شام سے کسی بھی ممکنہ فوجی کارروائی کے امکان کو ظاہر کرتی ہیں۔

اسرائیلی فوج نے اس سے قبل اعلان کیا تھا کہ اسرائیلی جنگی طیاروں نے شام کے وقت شام میں ایران سے منسلک اہداف پر بمباری کی۔ قبل ازیں فورسز نے گولان کی پہاڑیوں میں سرحد کے ساتھ سڑک کے کنارے نصب ایک بارودی مواد کا انکشاف کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں