.

سعودی وزارت انصاف نےبچے کے لیے تڑپتی ماں کو اس کا لخت جگر دلوا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی وزارت انصاف نے ایک خاتون کوانصاف دلاتے ہوئے اس کا شیرخوار بچہ اس کے باپ سے لے کر اس کےھوالے کر دیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق وزارت انصاف کی طرف سے ایک مقامی فیملی عدالت میں خاتون کی طرف سے دائر کردہ درخواست پرفوری عمل درآمد کراتے ہوئے اس کے سابقہ شوہر سے بچہ واپس لے کر خاتون کےحوالے کرانے کے لیے اقدامات کیے۔

تفصیلات کے مطابق ایک خاتون نے عدالت میں درخواست دی تھی کہ اس کے شوہر نے اسے طلاق دینے کے بعد اس کا شیرخوار بچہ چھین لی اہے، جس پر عدالت فوری حرکت میں آئی اور بچہ اس کے باپ سے لے کرماں کے حوالے کر دیا۔

خاتون نے درخواست میں کہا تھا کہ اسے طلاق کے بعد بچہ پیدا ہوا تھا۔ بچہ پیدا ہوتے ہی اس کا سابقہ شوہر زبردستی بچہ اس سے لے گیا تھا۔

خاتون نے بتایا کہ وہ دو ماہ تک بچے کے لیے تڑپتی رہی۔ بچے کو اس کی اشد ضرورت ہے۔ عدالت نے اپنے فیصلے میں واضح‌کیا ہے کہ شیرخوار بچوں کی کفالت ان کی ماں کی نگرانی میں ہوگی تاہم باپ بچوں کے نان نفقے کا ذمہ دار ہے۔ قانون کے تحت والد کو یہ حق حاصل نہیں کہ وہ طلاق کی صورت میں کم سن بچوں کو ماں سے چھین کر ماں اور بچوں کو ایک دوسرے سے دور کر دے۔