مصری سیکیورٹی وفد کی حماس سے مذاکرات کے لیے غزہ آمد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مصر کا ایک اعلیٰ سیکیورٹی وفد کل بدھ کے روز اسلامی مزاحمتی تحریک 'حماس' کے ساتھ موجودہ صورت حال اور اسرائیل کے ساتھ کشیدگی روکنے پر بات چیت کے لیے غزہ پہنچا ہے۔

فلسطین سے نشریات پیش کرنے والے 'الاقصیٰ' چینل کے ٹیلی گرام صفحے پر جاری ایک خبر میں بتایا گیا ہے کہ مصری وفد بدھ کے روز غزہ داخل ہوا۔

فلسطینی ذرائع کے مطابق مصری انٹیلی جنس حکام پر مشتمل وفد اسرائیل کے زیرکنٹرول بیت حانون گذرگاہ سے غزہ پہنچا۔ جرمن نیوز ایجنسی کے مطابق مصری وفد چند گھنٹے غزہ میں رکا اور پھر وہاں سے واپس چلا گیا ہے۔

قبل ازیں ستمبر میں مصری وفد نے غزہ کی پٹی کا دورہ کیا تھا۔ اس وقت غزہ کی پٹی کی سرحد پر اسرائیل اور فلسطینی مزاحمت کاروں کے درمیان کشیدگی پائی جا رہی تھی۔

حماس نے 31 اگست کو تین ہفتوں‌کی مسلسل کشیدگی کے بعد اسرائیل کے ساتھ جنگ بندی پر اتفاق کیا تھا۔

غزہ کی پٹی میں سنہ 2007ء میں حماس کے اقتدار میں آنے کے بعد اسرائیل کے ساتھ کئی بار کشیدگی پیدا ہو چکی ہے۔ مصر ہر بار فلسطینیوں اور اسرائیل کے درمیان کشیدگی میں کمی لانے کے لیے مفاہمتی کردار ادا کرتا رہا ہے۔ مصر کی کوششوں سے اسرائیل نے غزہ کی پٹی کی ناکہ بندی میں نرمی کی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں