.

کرونا ویکسین لینے والی پہلی سعودی خاتون کے مسرت سے لبریز تاثرات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں کل جمعرات سے شہریوں میں کرونا ویکسین لگائے جانے کا سلسلہ شروع کردیا گیا ہے۔ ایک سعودی خاتون جو مملکت میں ویکسین لگانے والی پہلی خاتون ہیں جنہوں‌نے یہ ویکسین لگائی ہے۔

ویکسین لگانے والی خاتون کے جذبات اور احساسات دیدنی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ویکسین لگانے والی خاتون شیخہ الحربی نے 'ٹویٹر' پر لکھا کہ وہ اپنی خوشی بیان نہیں کرسکتیں۔ ویکسین لگوانے کے بعد وہ خوشی سے رات کو سونہیں سکیں۔

شیخہ الحربی نے حکومت کو ڈھیروں دعائیں دیں اور کہا کہ اللہ ہماری حکومت کو شاد و آباد رکھے جو عوام کو اتنی زیادہ توجہ دیتی ہے۔ میں خود کو ایک خوش نصیب انسان سمجھتی ہوں۔ میں پہلی خاتون ہوں جس نے ویکسین لگائی ہے۔ ویکسین لگانے کی خوشی میری سب سے بڑی خوشی ہے۔

خیال رہے کہ سوشل میڈیا پر شیخہ الحربی نے ویکسین لگوانے کی متعدد تصاویر بھی پوسٹ کی ہیں۔ ان تصاویر میں اسے خوشی کے جذبات میں دیکھا جاسکتا ہے۔

خیال رہے کہ سعودی عرب کے وزیر صحت ڈاکٹر توفیق الربیعہ نے گذشتہ روز کرونا ویکسین لگوائی اور اس کےبعد انہوں‌نے عوام الناس میں یہ ویکسین لگانے کی مہم کا آغاز کردیا تھا۔ گذشتہ روز ڈیڑھ لاکھ سے زاید افراد نے ویکسین لگوانے کے لیے اپنی رجسٹریشن کی ہے۔ ویکسین لازمی نہیں بلکہ اختیاری ہوگی تاہم یہ سعودی باشندوں اور تارکین وطن سب کے لیے مفت ہوگی۔