.

امریکا : دہشت گردی کا شکار افراد کے لیے ایران کے لاکھوں ڈالر ضبط

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزارت انصاف کا کہنا ہے کہ اس نے واشنگٹن کی جانب سے ضبط کیے گئے ایران کے اثاثوں اور املاک سے 70 لاکھ ڈالر برآمد کر لیے ہیں تا کہ "تہران کی سرپرستی" میں ہونے والی دہشت گردی کا شکار ہونے والوں کو ہرجانہ ادا کیا جا سکے۔

امریکی معاون اٹارنی جنرل ڈیوڈ بیرنز کے مطابق آج ضبط کی جانے والی رقوم ان اداروں کے منافع کے طور پر مختص تھی جو ایران کے خلاف امریکی پابندیوں کی خلاف ورزی کے تفصیلی منصوبے میں شریک رہے۔

وزارت انصاف نے واضح کیا کہ ضبط شدہ رقوم اس فنڈ کو فراہم کی جائیں گی جو دہشت گردی کا شکار ہونے والوں کے لیے مختص ہے۔

دوسری جانب الاسکا ریاست میں امریکی"FBI" کے ڈائریکٹر رابرٹ بریٹ کا کہنا ہے کہ بیورو کے خصوصی ایجنٹس دہشت گردی کی فنڈنگ کرنے والوں کی معاونت کرنے والے اور اس واسطے امریکی مالیاتی نظام سے فائدہ اٹھانے والے ہر شخص کا بھرپور تعاقب کرے گی۔

اس سے قبل امریکی وزارت خزانہ ایران کی معدنی صنعت سے تعلق رکھنے والی 16 کمپنیوں اور ایک شخصیت پر پابندیاں عائد کرنے کا اعلان کیا تھا۔