.

فضائی حدود کھلنے کے بعد مصر میں قطر کے اقتصادی منصوبوں کا آغاز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے تاریخی شہر العلاء میں منظور کیے جانے خلیج تعاون کونسل [جی سی سی] کے اعلامیے کی روشنی میں منگل کے روز مصر نے قطری ائر لائن کو مصر آنے کی اجازت دینے کا اعلان کیا ہے۔

ادھر قاہرہ میں ’العربیہ‘ کو اپنے ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ اگلے چند دنوں کے دوران قطر اور مصر کے سفارتی اور سکیورٹی حکام کا اجلاس ہونے جا رہا ہے۔

انہی ذرائع کے مطابق آنے والے چند ہفتوں کے دوران قطر، مصر میں متعدد اقتصادی مںصوبے شروع کرنے جا رہا ہے۔ ان منصوبوں کو مکمل کرنے کی منظوری دی جا چکی ہے۔ ان اقتصادی منصوبوں میں سرفہرست ’’دیار کمپنی‘‘ کو مصر میں ’’سیٹی جیٹ‘‘ تعمیراتی منصوبہ مکمل کرنے کی منظوری شامل ہے۔

یاد رہے کہ سال 2017 میں سعودی عرب، متحدہ عرب امارات اور مصر نے قطر کے ساتھ سفارتی، سفری اور تجارتی تعلقات ختم کر دیے تھے۔ ان ممالک نے قطر کے ساتھ فضائی حدود کے علاوہ زمینی اور سمندری سرحدیں بھی بند کر دی تھیں۔

مصر کے حالیہ اعلان کے بعد قطر سے آنے والی پروازوں کو مصر کی فضائی حدود میں داخل ہونے کی اجازت ہوگی۔ دونوں ممالک کی قومی ایئر لائنز اپنے اپنے فلائٹ شیڈول منظوری کے لیے متعلقہ اداروں کو جمع کروائیں گی۔

قاہرہ کی وزارت ہوا بازی کے مطابق دونوں ممالک کے درمیان ہونے والے معاہدوں کی بحالی کے بعد تجارتی سامان کی آمد ورفت کا بھی آغاز ہو جائے گا۔

مصر اور اس کے اتحادی ممالک نے دہشت گردوں کی پشت پناہی کرنے کے الزام کی بنیاد پر قطر کے ساتھ تجارت پر عارضی پابندی عائد کی ہوئی تھی۔

سعودی عرب، عرب امارات اور بحرین نے قطر کے ساتھ اپنی فضائی رابطے بحال کر دیے ہیں۔