امریکا کا بغداد پر مبیّنہ فضائی حملے سے اظہارِلاتعلقی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

امریکا نے عراق کے دارالحکومت بغداد کے جنوبی حصے میں مبیّنہ فضائی حملے سے لاتعلقی کا اظہار کردیا ہے۔

بغداد میں امریکی سفارت خانے کے ترجمان نے کہا ہے کہ ’’ہم بغداد کے جنوب میں واقع جرف السخر کے نزدیک دھماکوں سے متعلق رپورٹس کا جائزہ لے رہے ہیں۔ہم یہ تصدیق کرسکتے ہیں کہ جرف السخر میں کوئی امریکی اہلکار یا اثاثہ موجود نہیں تھا اوراس مبیّنہ واقعہ میں امریکا ملوّث نہیں ہے۔‘‘

قبل ازیں عراقی وزیراعظم کے سکیورٹی میڈیا سیل کے ٹویٹرپرسرکاری اکاؤنٹ سے جاری کردہ بغداد میں سوموار کی شب ایک فضائی حملے کی تردید کی گئی ہے اور انھیں ’’نادرست‘‘ قرار دیا گیا ہے۔

میڈیا سیل نے کہا ہے کہ جائے وقوعہ سے دھماکوں کی آوازیں بجلی کے ٹاوروں سے آئی تھیں۔انھیں داعش کے جنگجوؤں نے اپنے حملے میں نشانہ بنایا تھا۔

سکیورٹی فورسز نے اس حملے میں ملوّث مشتبہ افراد کی تلاش کے لیے کارروائی شروع کردی ہے۔قبل ازیں سوموار کی شب متعدد رپورٹس میں یہ بتایا گیا تھا کہ یہ دھماکے امریکا یا اسرائیل کے فضائی حملوں کا نتیجہ ہوسکتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں