.

خامنہ ای نے بیرون ملک سے 'کرونا ویکسین' منگوانے کی اجازت دے دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای نے مقامی سطح‌پر کرونا ویکسین کی تیاری تک بیرون ملک سے ویکسین منگوانے کی اجازت دے دی ہے۔

ایرانی وزیر صحت سعید نمکی نے بتایا کی رہبر اعلیٰ آیت اللہ علی خامنہ ای نے مقامی سطح پر ویکسین کی تیاری تک بیرون ملک سے کرونا ویکسین درآمد کرنے کی اجازت دے دی ہے۔

خیال رہے کہ آیت اللہ علی خامنہ نے حکومت کو ہدایت کی تھی کہ وہ کرونا ویکسین بیرون ملک سے نہ منگوائے بلکہ مقامی سطح پر تیار کی جائے تاہم ان کے اس فیصلے کے خلاف مقامی اور عالمی سطح پر ایک مہم چلائی گئی تھی جس میں ان سے ویکسین کی درآمد پرپابندی اٹھانے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔ ایرانی وزیر صحت کا کہنا ہے کہ بیرون ملک سے کرونا ویکسین کا پہلا کنٹینر عن قریب ایران پہنچے گا۔

سعید نمکی نے تہران میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ خامنہ ای نے کبھی یہ نہیں کہا کہ خطرے سے دوچار شہریوں کی زندگی بچانے کے لیے بیرون ملک سے ویکسین نہ منگوائی جائے۔

انہوں نے کہا کہ ہم بیرون ملک سے کرونا ویکسین منگوانے پر غور کررہے ہیں دوسرے ممالک کی ویکسینوں کا باریکی کے ساتھ جائزہ لیا جا رہا ہے۔

ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای نے 8 جنوری کو ایک ٹی وی خطاب میں کہا تھا کہ امریکی اور برطانوی کرونا ویکسینیں ہمارے لیے ممنوع ہیں۔ایرانی وزیر صحت نے خامنہ ای کے موقف کا دفاع کرتے ہوئے کہا کہ امریکا سے کرونا ویکسین خرید کرنا منطق کے خلاف ہے۔