.

ایرانی عزائم کے خلاف مل کرکام کرنے کے جوبائیڈن کے عزم کا خیر مقدم کرتے ہیں: خالد بن سلمان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے نائب وزیر دفاع شہزادہ خالد بن سلمان بن عبدالعزیز نے امریکی صدر جوبائیڈن کے اس اعلان کا خیر مقدم کیا ہے جس میں انہوں‌نے ایرانی مظالم اور ایران کے توسیع پسندانہ عزائم کے خلاف اتحادی ممالک کے ساتھ مل کر چلنے پر اتفاق کیا ہے۔

مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ'ٹویٹر' پر اپنی متعدد ٹویٹس میں شہزادہ خالد بن سلمان نے کہا کہ ہمیں بتایا گیا ہے کہ امریکا کی حکومت خطے کو درپیش چیلنجز کے مقابلے کے لیے دوست ممالک کے ساتھ مل کر کام کرنے کے لیے پرعزم ہے۔

انہوں‌نے کہا کہ سعودی عرب نے ہمیشہ یمن کے تنازع کے سیاسی اور سفارتی حل کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے اس کی حمایت کی ہے۔ سعودی عرب کی جانب سے یمن میں آئینی حکومت کی حمایت اور ایرانی حمایت یافتہ حوثی ملیشیا کی مخالفت اصولی موقف پر مبنی ہے۔ مملکت اپنی اس پالیسی پر سختی کے ساتھ کار بند ہے۔

خیال رہے کہ گذشتہ روز امریکی صدر جوبائیڈن نے کہا تھا کہ سعودی عرب کو اپنی سرزمین اور خود مختاری کے دفاع کا حق حاصل ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ سعودی عرب کو ایرانی حمایت یافتہ قوتوں کی طرف سے خطرات لاحق ہیں جس پر سعودی عرب کو اپنے فاع کا حق ہے۔